12 نومبر، 2019 6:53 PM
Journalist ID: 2129
News Code: 83552591
0 Persons
 قازقستان میں ایرانی وزیر خارجہ کی ملاقاتیں

تہران، ارنا- قازقستان کے دورے پر آئے ہوئے اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر خارجہ نے قازقستان کے صدر سمیت دیگر اعلی حکام کیساتھ الگ الگ ملاقاتیں کیں۔

تفصیلات کے مطابق "محمد جواد ظریف" جو "آستانہ کلب" کی سالانہ بیٹھک میں شرکت کرنے کیلئے قازقستان کا دورہ کیا ہے، نے آج بروز منگل کو نورسلطان شہر میں قازقستان کے صدر مملکت "قاسم ژومارت توکایف" کیساتھ ملاقات کی۔

اس ملاقات میں دونوں فریقین نے باہمی تعلقات کی تازہ ترین صورتحال سمیت ایران جوہری معاہدہ، امریکی معاشی دہشتگردی، اقتصادی تعاون، دونوں ملکوں کے درمیان مشترکہ کمیشن اور اعلی سطحی وفدوں کے تبادلہ پر بات چیت کی۔

انہوں نے گزشتہ روز میں بھی نورسلطان میں قائم یوریشیا یونیورسٹی کا دورہ کرتے ہوئے اس یونیورسٹی کے میوزیم کا دورہ بھی کیا اور یادگار کتاب پر دستخط بھی کیا۔

ظریف نے یونیورسٹی کے پروفیسروں اور طلباء کو "جدید دنیا میں نئے نظریہ اور مکالمے" پر لیکچر دیا اور پھر ایک تقریب کے دوران، ایرانی وزیر خارجہ کو قازقستان کی یوریشیا یونیورسٹی کے آنریبل پروفیسر کے عنوان سے نوازا گیا۔

اس کے علاوہ ایرانی وزیر خارجہ نے گزشتہ روز، اپنے قازقستان کے ہم منصب "مختار تیلو بردی" کیساتھ ملاقات کی۔

اس ملاقات میں دونوں فریقین نے باہمی تعلقات کی تازہ ترین صورتحال بشمول مشترکہ اقتصادی کمیشن، تجارتی اور اقتصادی تعاون بالخصوص بحیرہ کسپین کے فریم ورک کے اندر اقتصادی تعاون، بندرگاہوں اور ایئر لائنز کے درمیان تعاون، قونصلر تعاون سمیت آستانہ رکن ممالک کے آئندہ اجلاس پر تبادلہ خیال کیا۔

محمد جواد ظریف نے آج بروز منگل کو آستانہ کلاب کے افتتاحی اجلاس کے موقع پر "ایک مستحکم اور پُرسکوں علاقے کے لوازمات" کے عنوان سے اپنی تقریر پیش کی۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 1 =