ایران کی سائبر ٹیکنالوجی شعبے میں علاقے کی پہلی پوزیشن

بجنورد، ارنا- ایرانی غیرفعال دفاع ادارے کے مشیر نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران گزشتہ سالوں سے اب تک سائبر ٹیکنالوجی شعبے میں علاقے کی سب سے پہلی طاقت ہے اور اس حوالے سے بہت بڑی ترقی کی ہے۔

ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر "ہوشنگ ہاتمی" نے اتوار کے روز ملک کے شمالی علاقے بجنورد میں غیر فعال دفاع سے متعلق منعقدہ ایک سمینار میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اب متعلقہ عہدیدار اس شعبے میں سنجیدگی سے شامل ہیں اور ساتھ ساتھ سائنس، تحقیق اور ٹیکنالوجی، صحت اور وزارت داخلہ کی وزارتوں نے بھی اس حوالے سے ضروری پالیسیاں مرتب کرکے اعلان کیا ہے۔

ہاتمی نے مزید کہا کہ اب 2 ہزار طالب علم غیر فعال دفاع کے شعبے میں زیر تعلیم ہیں اور 700 سے زائد مقالے بھی تیار کیے گئے ہیں. اس کے ساتھ ساتھ دیگر جامعات بھی اس اہم مسئلے پر بھی توجہ دی جارہی ہیں۔

 انہوں نے مزید کہا کہ اب سائبر ڈیفنس اور معاشی دفاع کی شاخیں بنانے کی بھی منظوری دی گئی ہے.

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 11 =