آذربائیجان سے تعلقات، اسٹریٹجک تعلقات کی طرف گامزن ہیں: ایرانی صدر

تہران، ارنا- اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر مملکت نے کہا کہ  گزشتہ 6 سالوں کے دوران، ایران اور آذربائیجان کے تعلقات میں مزید اضافہ ہوگیا ہے اور دونوں ملکوں کے تعلقات اسٹریٹجک تعلقات کی طرف گامزن ہیں۔

ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر حسن روحانی نے جمعرات کے روز دورہ باکو کی روانگی سے پہلے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہون نے کہا کہ وہ اپنے آذری ہم منصب "الہام علی اف" کی باضابطہ دعوت پر باکو میں منعقدہ  18 ویں غیر وابستہ ممالک کی تحریک کے اجلاس میں شرکت کرنے کیلئے آذربائیجان کے دورہ پر روانہ ہوں گے۔

صدر روحانی نے مزید کہا کہ ایک ایسے وقت جب امریکی حکام، یکطرفہ اقدامات اٹھانے سمیت دوسرے ممالک کے اندرونی معاملات میں مداخلت کر رہے ہیں اور ساتھ ہی ایران سے ان کی دشمنی واضح طور سامنے آئی ہے تو ہمیں تمام خطی اور بین الاقوامی اجلاسوں میں فعال شرکت کی ضرورت ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ امریکیوں کا پہلے ہی سے ارادہ تھا کہ وہ اسلامی جمہوریہ ایران کو دنیا میں اکیلا بنا دیں۔

انہوں نے دنیا میں ایران کی بڑھتی ہوئی پوزیشن کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ آج سب پر واضح ہے کہ  اسلامی جمہوریہ ایران خطے کا ایک اہم اور موثر ملک ہے۔

صدر روحانی نے مزید کہا کہ یہ کسی پر بوشیدہ نہیں ہے کہ ایرانی عظیم قوم، ملک کیخلاف دشمن عناصر بالخصوص امریکہ کی سازشوں کے سامنے نہیں جھکیں گے۔

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
captcha