دورے ایران کا مقصد خطے میں نئی کشیدگی کو روکنا ہے: عمران خان

تہران، ارنا – پاکستانی وزیر اعظم نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے دورے سے ہمارا مقصد علاقے میں ایک اور تنازع کو روکنا ہے.

یہ بات "عمران خان" نے اتوار کے روز ایران کے صدر مملکت "حسن روحانی" کے ساتھ مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہی.

انہوں نے کہا کہ ہم نے صدر روحانی کے ساتھ 2019 کے اپریل کو ایران، اس کے بعد نیویارک اور کرغزستان کے دارالحکومت بشکیک میں تیسرے ملاقاتیں کی ہیں.
عمران خان نے کہا کہ ہم نے ایرانی صدر کے ساتھ دوطرفہ تجارتی اور دیرینہ تعلقات پر تبادلہ خیال کیا، پاکستان کبھی بھی 1965 کے جنگ میں ایرانی امداد کو بھول نہیں کرے گا.
انہوں نے کہا کہ ہم کشمیری عوام کی حمایت میں اسلامی جمہوریہ ایران کی حکومت کا شکریہ ادا کرتے ہیں.
پاکستانی وزیر اعظم نے کہا کہ ایران کے دورے سے ہمارا اصلی مقصد یہ ہے کہ ہم خطے میں ایک اور تنازع نہیں چاہتے ہیں کیونکہ پاکستانی عوام گزشتہ 15 سالوں سے ایسے تنازعات کا شکار ہیں اور اب تک 70 ہزار پاکستانی عوام دہشتگردوں کے خلاف جنگ میں اپنی جانوں کا نذرانہ دے چکے ہیں.
انہوں نے کہا کہ شامی اور افغان عوام ابھی بھی دہشتگردوں کے منفی اثرات کا شکار ہیں.
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 7 =