ایران اخلاقی، مذہبی اور اسٹریٹجک وجوہات کی بناپر جوہری ہتھیاروں کا مخالف ہے: ظریف

تہران، ارنا – ایرانی وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ہم اخلاقی، مذہی اور اسٹریٹجک وجوہات کی بناپر جوہری ہتھیاروں کے مخالف ہیں.

یہ بات "محمد جواد ظریف" نے ہفتہ کے روز اپنے ٹوئٹر پیج میں ایرانی سپریم لیڈر کی حالیہ تقریر کی ویڈیو کلپ کو شائع کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے کہا کہ قائد اسلامی انقلاب طویل عرصے سے اسے بالکل واضح کرچکے ہیں کہ ایٹمی ہتھیار غیر اخلاقی اور اسلامی اصولوں کی خلاف ورزی ہے لہذا اس کی تیاری، فراہمی، ذخیرہ اور استعمال کرنا حرام ہے.
ظریف نے کہا کہ ہم اخلاقی، مذہبی اور اسٹریٹجک ضروریات کی وجوہات کی مبنی پر ایٹمی ہتھیاروں کے مخالف ہیں.
تفصیلات کے مطابق، ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای نے رواں سال کے دوران ایک فتوی میں جوہری ہتھیاروں کی تیاری، استعمال اور ذخیرہ کرنے کو حرام اعلان کردیا ہے.
یاد رہے کہ حضرت آیت اللہ خامنہ ای نے بدھ کے روز سائنسی میدان میں ملک کے ممتاز دانشوروں کے ساتھ ایک ملاقات میں ایک بار پھر جوہری ہتھیاروں اور ان کے استعمال سے متعلق ایرانی موقف کو اجاگر کرتے ہوئے فرمایا کہ جوہری بم کی تیاری اور ان کا استعمال حرام ہے۔
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 4 =