9 اکتوبر، 2019 4:01 PM
Journalist ID: 2393
News Code: 83510533
0 Persons
ایران کا شام سے امریکی فوج کے انخلاء کا خیرمقدم

تہران، ارنا - ایرانی صدر کے چیف آف اسٹاف نے کہا ہے کہ شام میں موجودہ امریکی فوج کے انخلا سے ایران کی حمایت کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ وہ غیرملکی فورسز بشمول امریکہ جو شامی حکومت کی ہم آہنگی کے بغیر اس ملک میں موجود ہیں، شام کو چھوڑنا چاہئے.

یہ بات محمود واعظی نے بدھ کے روز صحافیوں کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے کہا کہ ہم سب کو شامی مسائل کو پرامن مذاکرات کے طریقے سے حل کرنے کی کوشش کرنی ہوگی.
واعظی نے شامی سرکاری حکومت کی دعوت کے بغیر تمام غیر ملکی فورسز کے انخلا پر زور دیتے ہوئے کہا کہ اس فورسز کی موجودگی خطے میں عدم استحکام اور بدامنی کا باعث ہے اسی لیے انہیں شام کو چھوڑنا چاہئے۔
انہوں نے کہا کہ ہم ٹرمپ کے فیصلے، شامی علاقے عفرین سے امریکی فورسز کا انخلا، کا خیر مقدم کرتے ہیں کیونکہ ہم اس بات پر یقین ہے کہ تمام ممالک خود باہمی مفاہمت، مشاورت اور مذاکرات سے اپنے اندرونی مسائل کو حل کر سکتے ہیں.
انہوں نے شامی شمالی علاقوں پر ترکی کے موقف کے حوالے سے کہا کہ ہم شامی سرحد پر ترکی کی پریشانیوں کو سمجھتے ہیں اور اس حوالے سے ان کے ساتھ بات چیت کی ہے لیکن اس علاقے میں کسی بھی فوجی اقدام خطے اور علاقائی سیکورٹی کے لیے نقصان دہ ہوگا.
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 1 =