ایرانی سرحدی علاقے شلمچہ میں پاکستانی زائرین کے مشکل کا حل

تہران، ارنا – ایرانی وزارت خارجہ کے ادارے پاسپورٹ اور ویزے کے سربراہ نے کہا ہے کہ سرحدی علاقے شلمچہ میں کربلای معلی کے دورے کرنے والے پاکستانی زائرین کے مشکل کا حل اور عراق میں داخل ہوگئے ہیں.

یہ بات "مجتبی کریمی" نے پیر کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.

اس موقع پر انہوں ںے کہا کہ عراق میں حالیہ دنوں کے دوران انٹرنیٹ کو منقطع ہونے کی وجہ سے پاکستانی زائرین کے لئے سرحدی کی تبدیلی کا امکان نہیں تھا مگر وزارت خارجہ اور عراق میں قائم ایرانی سفارتخانے کی کوششوں کے ساتھ ان کے مشکل کا حل ہوگیا.
ہرسال محرم الحرام اور اربعین کے موقع پر بڑی تعداد میں پاکستانی زائرین کربلای معلی کے دورے کے لئے ایرانی سرحدی علاقوں سے ملک میں داخل ہو رہے ہیں.
گزشتہ سال کے اربعین کے موقع پر 45 ہزار پاکستانی زائرین صوبے سیستان و بلوچستان کے سرحدی علاقوں سے ملک میں داخل ہوگئے، رواں سال ان کی تعداد 100 ہزار تک پہنچے گی.
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
7 + 2 =