19 ہزار سے زائد پاکستانی زائرین کی میرجاوہ سرحد سے ایران آمد

زاہدان، ارنا – 19 ہزار اور 703 پاکستانی زائرین گزشتہ مہینے کے دوران کربلای معلی کے دورے کے لئے ایرانی سرحدی علاقے میرجاوہ سے صوبے سیستان و بلوچستان میں داخل ہوگئے ہیں.

یہ بات ایرانی جنوب مشرقی صوبے سیستان و بلوچستان کے ادارے روڈ ٹرانسپورٹ کے ڈائریکٹر جنرل "ایوب کرد" نے منگل کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے کہا کہ محرم الحرام کے موقع پر پاکستانی زائرین کی ایران آمد میں گزشتہ سال کے مقابلے میں 23 فیصد کا اضافہ دیکھنے میں آیا ہے.
کرد نے کہا کہ ایرانی علاقے میرجاوہ میں پاکستانی زائرین کے لئے مختلف فلاحی ، ثقافتی اور طبی خدمات پیش کر رہے ہیں.
ایران کے صوبائی محکمہ صحت کے مطابق، 16620 پاکستانی زائرین کو طبی اور صحت کی سہولیات دے دی گئیں.
محرم الحرام کی آمد کے موقع پر ایرانی سرحدی علاقے میرجاوہ میں پاکستانی زائرین وبائی بیماریوں کے لحاظ سے معاینہ کئے جاتے ہیں.
تفصیلات کے مطابق، ایرانی جنوب مشرقی صوبے سیستان و بلوچستان کے سرحدی علاقے میرجاوہ میں پاکستانی زائرین کے لئے صحت کی خدمات فراہم کرنے والے دو مراکز کا قائم کیا گیا.
ہرسال محرم الحرام اور اربعین کے موقع پر بڑی تعداد میں پاکستانی زائرین کربلای معلی کے دورے کے لئے ایرانی سرحدی علاقے میرجاوہ سے ملک میں داخل ہو رہے ہیں.
گزشتہ سال کے اربعین کے موقع پر 45 ہزار پاکستانی زائرین صوبے سیستان و بلوچستان کے سرحدی علاقوں سے ملک میں داخل ہوگئے، رواں سال ان کی تعداد 100 ہزار تک پہنچے گی.
9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
7 + 0 =