ایران اور فرانس کے صدور کی علاقائی تناو کے خاتمے پر بات چیت

نیویارک، ارنا – اسلامی جمہوریہ ایران اور فرانس کے صدور نے گزشتہ روز نیویارک میں علاقائی تنازعات کے خاتمے پر بات چیت کی.

فرانسیسی صدر "ایمانوئل میکرون" نے گزشتہ روز نیویارک میں اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کی 74ویں نشست کے موقع پر اپنے ایرانی ہم منصب "حسن روحانی" کے ساتھ ملاقات کی.

اس ملاقات کے دوران فریقین نے دوطرفہ تعلقات، علاقائی اور عالمی مسائل پر تبادلہ خیال کیا.
دونوں رہنماوں نے ایران فرانس تعلقات، خطے کی نازک صورتحال اور خلیج فارس کی سلامتی کے لئے صدر روحانی کے "آبنائے ہرمز کا قیام امن" منصوبے پر گفتگو کی.
صدر روحانی نے عالمی جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کے بعد فرانس سمیت دیگر مغربی فریقین کی جانب سے وعدوں پر عملدرآمد پر زور دیتے ہوئے فرانس، برطانیہ اور جرمنی کے ایران مخالف الزامات بیان پر بھی تنقید کی.
صدر میکرون نے ایرانی ہم منصب کے علاقائی امن منصوبے پر اپنی دلچسبی کا اظہار کرتے ہوئے کہا جوہری معاہدے کے تحفظ کے لئے فرانس کی کوششوں پر روشنی ڈالی.
انہوں نے اس حوالے سے یورپ، روس اور چین کے درمیان قریبی تعاون کی ضرورت پر بھی زور دیا.
انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران ایک اہم علاقائی ملک ہے اسی لئے ہم اس کے ساتھ تعمیری تعلقات کو فروغ دینے کو بڑی اہمیت دیتے ہیں.
یہ بات قابل ذکر ہے کہ صدر روحانی اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے 74ویں اجلاس میں شرکت کے لئے گزشتہ روز نیویارک پہنچ گئے.
ایرانی صدر نے فرانسیسی ہم منصب سے پہلے وزیراعظم پاکستان عمران خان کے ساتھ ملاقات کی تھی.
روحانی نے نیوریاک کے جان ایف کنڈی ایئرپورٹ آمد کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کیا کہ وہ خلیج فارس میں بیرونی مداخلت کے خاتمے اور قیام امن سے متعلق خطے کی تمام اقوام بالخصوص عظیم ایرانی عوام کے پیغام امن کو دیا تک پہنچائیں گے.
274*9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 9 =