ایران میں حقوق نسواں کا معیار خطی ملکوں سے زیادہ بہتر ہے: ترجمان

تہران، ارنا – ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا ہے کہ دوسرے علاقائی ممالک کی بہ نسبت ایران میں انسانی حقوق خاص طور پر خواتین کے حقوق کی صورتحال بہتر ہے.

ترجمان دفترخارجہ سید عباس موسوی نے پیر کے روز ایران میں انسانی حقوق کی صورتحال سے متعلق یورپی پارلیمنٹ کی حالیہ قرارداد پر اپنے ردعمل کا اظہار کیا.
انہوں نے مزید کہا کہ دوسرے خطی ممالک اور انسانی حقوق کے دعوے کرنے والے ممالک کے مقابلے میں ایران میں انسانی حقوق کی صورتحال بہت اچھی ہے.
موسوی نے کہا کہ ہم انسانی حقوق کے اصولوں پر پابند رہنے کو مذہبی اور قانونی لحاظ سے ضروری سمجھتے ہیں جو قومی مفاد کے حق میں ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ ہم انسانی حقوق کی پابندی کو مذہبی اور قانونی فریضہ سمجھتے ہیں تو ہم کو انسانی حقوق پر پابندی کے لیے دوسروں کے حکم کی کوئی ضرورت نہیں ہے.
انہوں نے کہا کہ ایران کے خلاف یوروپی پارلیمنٹ کی متعصبانہ،جانبدارانہ، یک طرفہ، غیر حقیقی اور مایوس کن قرارداد ایک ایسے وقت میں سامنے آئی ہے جب امریکہ ایران کے خلاف معاشی دہشت گردی کے ذریعے 800 لاکھ سے زائد افراد کے حقوق کو پامال کر رہا ہے ؛جو یہ مسئلہ یوروپی پارلیمنٹ کے ممبران کی جانب سے نظرانداز کردیا گیا ہے.
9410*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 13 =