ایران نے جوہری معاہدہ کمیشن میں امریکی واپسی کو معاشی جنگ کے خاتمے سے مشروط کردیا

نیو یارک، ارنا - وزیر خارجہ اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن میں امریکہ کی واپسی کے لئے سب سے پہلے ایران کے خلاف جاری معاشی دہشتگردی اور جنگ کا خاتمہ ناگزیر ہے.

یہ بات محمد جواد ظریف نے گزشتہ روز ارنا کے ایک صحافی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی
«محمد جواد ظریف» نے مزید کہا کہ جوہری معاہدہ کمیشن میں امریکی واپسی سے متعلق کوئی تذکرہ نہیں تاہم اگر امریکہ بحیثیت مہمان یا رکن اس میں شریک ہونا چاہتا تو اسے پہلے معاشی جنگ کو بند کرنا ہوگا.

انہوں نے کہا کہ ایٹمی جوہری کے مشترکہ کمیشن میں امریکی موجودگی کے حوالے سے ہمیں کوئی تجویز نہیں دی گئی ہے تاہم ہم نے یہ بات بالکل واضح کردی ہے کہ مذاکرات کی میز موجود ہے اور وہ امریکہ تھا جس نے اس کو چھوڑ دیا.

ظریف نے مزید کہا کہ مذاکرات کی میز جوہری معاہدے کے اراکین اور وہ لوگ جو اپنے جوہری وعدوں پر عمل کر رہے ہیں، سے متعلق ہے.

ایرانی وزیر خارجہ نے کہا کہ یہ ممکن نہیں ہے کہ امریکہ ایک ہی وقت میں ایران کے خلاف معاشی جنگ کو جاری رکھے اور دوسری طرف سے مذاکرات کی میز پر آئے.

9410٭274٭٭
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 6 =