امریکی پابندیوں نے سفارتی کوششوں کو خطرے میں ڈال دیا ہے: صالحی

لندن، ارنا - ایرانی ادارہ جوہری توانائی کے سربراہ نے کہا ہے کہ امریکہ کی یکطرفہ اور غیرقانونی پابندیوں نے سفارتکاری کے نتائج کو سنگین خطرات سے دوچار کیا ہے.

علی اکبر صالحی جو بین الاقوامی جوہری توانائی ادارے کی 63ویں سالانہ کانفرنس میں شرکت کے لئے ویانا کے دورے پر ہیں، نے اپنی تقریر میں جوہری معاہدے سے متعلق وعدہ خلافی کرنے پر مغربی فریقین کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا.
انہوں نے کہا کہ اس نازک صورتحال میں عالمی جوہری ادارے کے سالانہ اجلاس حالیہ چیلنجز کا جائزہ لینے کے لئے ایک اہم موقع ہے.
صالحی نے مزید کہا کہ پرامن جوہری پروگرام کے فروغ اور توانا‏ئی، صحت اور زراعت کے شعبوں میں جوہری ٹیکنالوجی کے استعمال کے لئے ایران کے مقاصد معقول ہیں اور ہم نے اب تک اس راستے میں متعدد کامیابیاں حاصل کی ہیں.

صالحی نے نیوکلیئر سیفٹی کے حوالے سے کہا کہ نیوکلیئر سیفٹی ہمیشہ ہماری ترجیحات میں سے ایک ہے.

تفصیلات کے مطابق صالحی گزشتہ روز بین الاقوامی توانائی ایجنسی کی 63 ویں سالانہ جنرل کانفرنس میں شرکت کے لیے آسٹریا کے دارالحکومت ویانا روانہ ہوگئے.
بین الاقوامی توانائی ایجنسی کی 63 ویں سالانہ جنرل کانفرنس16 سے 20 ستمبر تک عالمی توانائی ایجنسی کے ہیڈکوارٹر ' ویانا' میں منعقد کی جائے گی.
9410٭274٭٭
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 10 =