ایران، انڈونیشیا کو طبی سازومان، ادویات برآمد کرنے پر آمادہ

تہران، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے انڈونشیا کو طبی ساز و سامان بالخصوص ادویات تیار کرنے کی ٹیکنالوجی فراہم کرنے پر اپنی آمادگی کا اظہار کیا ہے.

یہ بات نائب ایرانی صدر برائے سائنسی اور ٹیکنالوجی امور "سورنا ستاری" نے انڈونیشین خاتون وزیر صحت "نیلا فریدمولک" کے ساتھ ایک ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کم قیمت اور اعلی معیار کے ساتھ دواسازی کی ٹیکنالوجی اور طبی آلات کو انڈونیشیا میں منتقل کرسکتا ہے جس کے نتیجے میں دونوں ممالک کے درمیان باہمی تعاون کو فروغ ملیں گے.
انڈونیشین خاتون وزیر صحت نے مختلف سائنسی شعبوں میں ایران کی کامیابیوں کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس ملک کے دورے سے ہمارا مقصد گزشتہ سالوں کے دوران دستخط ہونے والے معاہدوں پر پیشرفت کا جائزہ لینا ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ انڈونیشیا ایرانی ترقی یافتہ ٹیکنالوجی سمیت صحت کے شعبے میں نینوٹیکنالوجی کو اپنانے کے لئے تیار ہے.
فریقین نے اس ملاقات کے دوران انڈونیشیا سے ایران میں پانچ انسانی ویکسین پروڈکشن کی ٹیکنالوجی کی منتقلی اور ایران سے انڈونیشیا میں نینو ٹیکنالوجی کی مصنوعات کی برآمدات اور منتقلی کے معاہدوں پر دستخط کردئے.
274*9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 15 =