انفرادیت پر مبنی پالیسی دہشتگردی کے پھیلاؤ کی وجہ ہے: ایران

نیو یارک، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے کہا ہے کہ دہشتگردی اور انتہاپسندی کے پھیلاو کہ اصل وجوہات انفرادیت پر مبنی پالیسی اور یکطرفہ اقدامات ہیں جن سے دیا کو سنگین خطرات لاحق ہیں.

یہ بات سنیئر ایرانی سفارتکار «فرہاد ممدوحی» نے گزشتہ روز اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی جس کا عنوان «امن کی ثقافت» تھا.

انہوں نے مزید بتایا کہ موجودہ دنیا میں امن کے راستے میں بڑے چیلنجز موجود ہیں اور بین الاقوامی اور علاقائی سطح پر موجودہ اور ابھرتے ہوئے خطرات، امن و سلامتی کی ترقی کے لئے ایک رکاوٹ ہے

ایرانی سفارتکار نے کہا کہ ان خطرات میں سے ایک انفرادیت ہے اور حقیقت میں یکطرفہ اقدامات، یکطرفہ پابندیاں، قومی پالیسی کے اہداف کے حصول کے لئے ایک آلہ کار کے طور پر استعمال ہوتی ہیں جو یہ علاقائی اور بین الاقوامی امن کے فروغ پر بہت منفی اثر پڑتا ہے
انہوں نے مزید بتایا کہ دنیا بھر خصوصا مشرق وسطی میں دہشت گردی اور انتہا پسندی کا بڑھتا ہوا خطرہ، انفرادیت، مداخلت پسندانہ، غلط اور احمقانہ پالیسیوں کا نتیجہ ہے.

9410٭274٭٭

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 7 =