ایران، منشیات کیخلاف جنگ میں صف اول کا کردار ادا کررہا ہے: وزیر داخلہ

تہران، ارنا- اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر داخلہ نے منشیات کیخلاف جنگ میں ایران کے تجربات کو کرغیزستان سے تبادلہ پر آمادگی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ایران کو انسداد منشیات کے حوالے سے صف اول کا کردار حاصل ہے۔

یہ بات کرغیزستان کے دورے پر آئے ہوئے "عبدالرضا رحمانی فضلی" نے کرغیرقستان کے انٹی نارکوٹکس سروس کا معاینہ کرتے ہوئے اس ادارے کے سربراہ سے ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ 

انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے انسداد مشیات کے حوالے سے بہت سارے اقدامات اٹھائے ہیں اورعدم بین الاقوامی تعاون کے باوجود اپنی کوششوں کا سلسلہ جاری رکھے گا۔

رحمانی فضلی نے افغانستان میں منشیات کی کاشت اور پیداوار کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ باوجود اس بات کے امریکہ اپنی تمام تر سہولیات کے ساتھ افغانستان میں موجود ہے لیکن اس نے منشیات کی روک تھام کے حوالے سے کوئی اقدام نہیں اٹھایا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ رکاوٹوں کے باوجود پھر بھی ایران، افغانستان کے ساتھ مشترکہ سرحدوں کا سنجیدگی سے کنٹرول کر رہا ہے تاہم افغانستان منشیات کی روک تھام کے حوالے سے اپنی سرحدوں کا کنٹرول نہیں کرتا ہے۔

ایرانی وزیر داخلہ نے مزید کہا کہ یورپی اور مغربی ممالک نے بھی اس سلسلے میں ایران کا کوئی مدد نہیں کیا اور ہم صرف اپنی انسانی اور اسلامی ذمہ داریوں کی بناپر منشیات کی روک تھام کے حوالے سے کوشان ہیں۔

تفصیلات کے مطابق، منشیات پکڑنے میں اسلامی جمہوریہ ایران دنیا میں پہلی پوزیشن رکھتا ہے.

اس شعبے میں ایران نے بڑی قربانی دی ہے بلکہ منشیات کی لعنت کے خاتمے کے لئے ایران نے جانی اور مالی نقصانات بھی اٹھائے.

ایران، پاکستان کے ساتھ پڑوسی ہونے اور افغانستان سے یورپ تک منشیات اسمگلنگ کرنے کے راستے میں واقع ہونے کی وجہ سے اس لعنت کی روک تھام کی فرنٹ لائن پر ہے اسی لیے ایران کو منشیات کے خلاف لڑائی میں سب سے زیادہ جانی اور مالی نقصان کا سامنا ہے.

اب تک ہزاروں ایرانی اہلکار منشیات کے خلاف جنگ میں اپنی جانوں کا نذرانہ دے چکے ہیں۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 6 =