زیر حراست میں برطانوی بحری جہاز کے سات عملے کو رہا کردیا گیا: ایران

تہران، ارنا – ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے اس بات پر زور دیا ہے کہ زیر حراست برطانیہ کے تیل بردار سمندری جہاز «سٹینا امپیرو» کے سات عملے کو رہا کردیا گیا.

یہ بات "سید عباس موسوی" نے بدھ کے روز ایرانی نیوز چینل کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے کہا کہ زیر حراست برطانوی بحری جہاز نے غیرقانونی اقدامات اٹھایا ہے ورنہ ہمیں ان کے عملہ اور کپتان سے کوئی مسئلہ نہیں ہے۔
واضح رہے کہ پاسداران اسلامی انقلاب کی بحری فورس نے 20 جولائی کو آبنائے ہرمز میں ایک برطانوی آئل ٹینکر کو بین الاقوامی سمندری قوانین کی خلاف ورزی کیلئے اپنی تحویل میں لے لیا ہے۔
پاسداران اسلامی انقلاب کی بحری فورس کے شعبہ تعلقات عامہ نے ایک بیان میں مزید کہا کہ ایران نے 20 جولائی کو آبنائے ہرمز میں برطانوی آئل ٹینکرstena impero کو بین الاقوامی سمندری قوانین کی خلاف ورزی کی بدولت اور صوبے ہرمزگان کے شپنگ اینڈ پورٹس کے ادارہ کی درخواست کی بناپر اپنی تحویل میں لے لیا ہے۔
برطانوی تیل بردار بحری جہاز 18 بھارتی، پانچ روسی، فلپائن اور لاتویا کے عملے پر مشتمل تھے.
9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 3 =