22 اگست، 2019 5:35 PM
Journalist ID: 1917
News Code: 83446863
0 Persons
ناروے نے ایران جوہری معاہدے کی بھرپور حمایت کی

اوسلو، ارنا- نارویجین پارلیمنٹ کے خارجہ اور دفاعی پالیسی کمیشن کی خاتون سربراہ نے کہا ہے کہ اگرچہ ناروے امریکہ کا قریبی شراکت دار ہے لیکن وہ، ایران جوہری معاہدے کی بھر پور حمایت کرتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ناروے ایران کیساتھ باہمی تجارتی تعلقات میں اضافے کی حمایت کرتا ہے۔

ان خیالات کا اظہار "آنیکن ہوئیت فلدت" نے جمعرات کے روز ناروے کے دورے پر آئے ہوئے "محمد جواد ظریف" کیساتھ  ملاقات کے بعد صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ان کی ایرانی وزیر خارجہ کیساتھ ملاقات میں اسلامی جمہوریہ ایران اور امریکہ کے درمیان حالیہ کشیدگی پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

نارویجین پارلیمنٹ کے خارجہ اور دفاعی پالیسی کمیشن کے سربراہ نے اسلامی جمہوریہ ایران سے جوہری معاہدے کی پچھلے صورتحال سے واپسی کا مطالبہ کیا۔

انہوں نے اس بات پر زوردیا کہ اگرچہ ناروے امریکہ کا قریبی شراکت دار ہے لیکن ایران سے باہمی تعلقات کے فروغ اور جوہری معاہدے  کی بھر پور حمایت کرتا ہے۔

انہوں نے ایران کیساتھ باہمی تعلقات کے فروغ پر بھی زور دیا۔

واضح رہے کہ ایرانی وزیر خارجہ نے اس ملاقات کے بعد اپنی نارویجین ہم منصب "اینہ اریکسون سوریدہ" کیساتھ ملاقات کی۔

اس ملاقات میں دونوں فریقین نے باہمی دلچسبی امور سمیت علاقائی اور بین الاقوامی مسائل پر تبادلہ خیال کیا۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ محمد جواد ظریف، ناروے کے سرکاری دورے کے بعد فرانس روانہ ہوجائیں گے جہاں وہ فرانس کے صدر "ایمانوئل میکرون" اور اپنے فرانسیسی ہم منصب کیساتھ الگ الگ ملاقاتیں کریں گے۔
**9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 14 =