ایران نے جوہری وعدوں کی معطلی کے حوالے سے صحیح راستہ اختیار کیا ہے: روحانی

تہران، ارنا-  اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر مملکت نے جوہری وعدوں میں معطلی کے حوالے سے ایران کے فیصلے کو صحیح قرار دیتے ہوئے کہا کہ ہماری صبر و تحمل کی کوئی حد ہوتی ہے اور ہم دوسرے فریقین کی وعدہ خلافی کو برداشت نہیں کرسکتے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر "حسن روحانی" نے آج بروز بدھ کو قائد اسلامی انقلاب حضرت آیت اللہ خامنہ ای کیساتھ ایک ملاقات میں گفتگو کرتے ہوئے فرمایا۔

ہونے والی ملاقات میں اسلامی جمہوریہ ایران کی حکومت کے دیگر اراکین بھی شریک تھے۔

انہوں نے گزشتہ سال کے دوران، ملک میں مصنوعات اور ڈالر کی قیمت میں اتار چڑھاؤ کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ایرانی مصنوعات کی برآمدات اور درآمدات کی راہ میں رکاوٹیں ڈالنے کی ساری امریکی کوششوں کے باجود ایرانی مارکیٹ میں استحکام لایا گیا ہے۔

صدر روحانی نے بیرونی دباؤ کے سامنے ایرانی عوام کی مزاحمت کو سراہتے ہوئے مزید کہا کہ بین الاقوامی سطح پر امریکہ بطور ایک وعدہ خلاف کرنے والے الگ تھلگ ملک پہچانا جاتا ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران، قانونی لحاظ سے پہلی بار کیلئے بین الاقوامی قانونی تنظیموں میں دو دفعہ امریکہ کیخلاف مقدمہ جیتنے میں کامیاب ہوگئے ہیں۔

ایرانی صدر نے ایران مخالف امریکی پابندیوں کو دہشتگردانہ اقدام قرار دیتے ہوئے کہا کہ امریکہ نے پوری ایرانی قوم کو معاشی دہشتگردی کا نشانہ بنایا ہے۔

**9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 8 =