افغانستان کا ایرانی نجی شعبے کیساتھ بجلی کی فراہمی کیلئے باہمی تعاون کا خواہاں

کابل، ارنا – افغان وزیر بجلی اور توانائی نے کہا ہے کہ ہم بجلی کی فراہمی کے لئے ایرانی نجی شعبوں کے سرمایہ کاروں کی موجودگی کی حمایت کر رہے ہیں.

یہ بات "محمد گل خلمی" نے اتوار کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے کہا کہ اب تک پانچ کمپنیوں نے بجلی کی فراہمی کے لئے 370 ملین ڈالر سرمایہ کاری کی ہیں.
گل خلمی نے کہا کہ افغان حکومت بجلی کی فراہمی کے لئے ایرانی کمپنیوں کی سرمایہ کاری کی حمایت کرے گی کیونکہ ابھی بھی ہماری قوم کے 40 فیصد بجلی کی توانائی سے استعمال کر رہی ہے.
انہوں نے حالیہ دنوں میں اسلامی جمہوریہ ایران اور افغانستان کے درمیان مشترکہ کمیشن کے اجلاس کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ نائب ایرانی وزیر توانائی کی قیادت میں ایک ماہر وفد نے بجلی منصوبے کے جائزہ اور اس پر عملدرآمد کرنے کے لئے افغانستان کا دورہ کیا.
افغان وزیر بجلی نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران بجلی کی فراہمی میں اعلی صلاحیتیں رکھتا ہے جس سے افغانستان کا استعمال کر سکتا ہے.
انہوں نے کہا کہ افغانستان اسلامی جمہوریہ ایران اور وسطی ایشیائی ممالک کے درمیان ایک مناسب رابطے کا کردار ادا کرسکتا ہے.
انہوں نے پڑوسی ممالک کے درمیان بجلی کے کنکشن کی اہمیت پر زور دیا اور کہا کہ یہ کنکشن علاقائی استحکام کا باعث ہوگا.
9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
6 + 7 =