ظریف کو ایران اور انسانیت کیلئے خدمات سے پہچانتے ہیں: سابق یو این نائب سربراہ

نیویارک، ارنا - سابق سربراہ اقوام متحدہ کے معاون برائے سیاسی امور نے کہا ہے کہ ہم ظریف کو ان کی ایران اور انسانیت کے لئے نمایاں خدمات سے جانتے ہیں اور ان سے دوستی پر فخر کرتے ہیں.

یہ بات "گیاندومینیکو پیکو" نے ہفتہ کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.

اقوام متحدہ کے سابق ڈپٹی سیکرٹری جنرل نے ایرانی وزیر خارجہ کے خلاف امریکی یک طرفہ پالیسی کے ردعمل میں کہا ہے کہ ہم نے محمد جواد ظریف کو ایران اور انسانیت کی خدمت کے ساتھ پہچان لیا اور اس کے ساتھ دوستی پر فخر کرتے ہیں.
پیکو نے تین دہائی سے پہلے ایران کے آٹھ سالہ تحمیلی، افغانستان اور لبنان کے خلاف جنگوں کے دوران اقوام متحدہ میں محمد جواد ظریف کے ساتھ ملاقات اور گفتگو کی ہے.
انہوں نے کہا کہ ہم اسی دوران میں انسانی جانوں کو بچنے کے لئے ظریف کی خدمات کو بھول نہیں کریں گے لہذا ہم نے سفارتکاری کی ترقی کے لئے ان کے اہم کردار کی تعریف کی ہیں.
اطالوی سفارتکار نے اسلامی جمہوریہ ایران اور عراق کے درمیان آٹھ سالہ تحمیلی جنگ کے آخری سالوں میں اس جنگ کے خاتمے کے لئے اقوام متحدہ کے ثالثی کردار کا ادا کیا.
پیکو سابق اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل "خاوریر پرز دکوئیار" کے ڈپٹی برائے سیاسی امور تھے.
انہوں نے مزید کہا کہ ظریف نے اپنے ہاتھوں میں ہٹھیار کے بغیر انسانی جانوں کو بھیج دیا. انہوں نے بے گناہ لوگوں کو قید سے رہائی میں مجھے مدد کی۔
یہ بات قابل ذکر ہے کہ امریکی وزارت خزانہ نے ایران کیخلاف اپنی دشمن پالیسیوں کے تسلسل میں جمعرات کی رات کو ایرانی وزیر خارجہ کے نام کو اپنی پابندیوں کی فہرست میں قرار دے دیا۔
9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 3 =