ایران کو ایک بار پھر تیل پیداوار کم کرنے کے معاہدے سے چھوٹ مل گئی

لندن، ارنا – ایرانی وزیر تیل نے کہا ہے کہ اوپیک تنظیم کے اجلاس میں تمام ایرانی مطالبات منظور کئے گئے اور تیل کی پیدوار کو کم کرنے کے معاہدے سے ایک بار پھر ہمیں استثنی حاصل ہوئی.


یہ بات بیژن نامدار زنگنہ جو تیل برآمد کرنے والے ممالک کی تنظیم (OPEC) کے 176ویں اجلاس میں شرکت کے لئے ویانا کے دورے پر ہیں، نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے مزید کہا کہ گزشتہ اجلاس کے مطابق اس بار بھی ایران کو تیل کی پیداوار کم کرنے سے متعلق اوپیک معاہدے سے چھوٹ ملی.
زنگنہ نے اوپیک اور نان اوپیک ممالک کے درمیان تعاون پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا اوپیک اور نان اوپیک سے متعلق اصلاحات کو اچھی طرح لاگو کردیا گیا تاہم حالیہ فیصلوں پر عمل درآمد سے ممالک پر کوئی زبردستی نہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ اوپیک منشور میں ہونے والی اصلاحات پر اسلامی جمہوریہ ایران کو اعتماد میں لیا گیا ہے.
274**9393*
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@ 

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
1 + 6 =