ایران جوہری معاہدہ: ویانا میں مشترکہ کمیشن کے اجلاس کا انعقاد

لندن، ارنا - ایران جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کے اجلاس کا آغاز جمعہ کے روز ویانا میں ہوگیا جس میں رکن ممالک کے نائب وزرائے خارجہ اور ڈائریکٹرز جنرل شریک ہیں.

ایرانی وفد کی قیادت نائب وزیرخارجہ سید عباس عراقچی کررہے ہیں جبکہ یورپی یونین کی فارن ایکشن سروس کی سیکریٹری جنرل ہلگا اشمد نشست کی صدارت کررہی ہیں.
گزشتہ روز عراقچی نے روس اور چین کے نمائندوں کے ساتھ جوہری معاہدے کی تازہ ترین صورتحال پر تبادلہ خیال کیا جس کے بارے میں ویانا میں تعینات ایران کے مستقل مندوب کاظم غریب آبادی کا کہنا ہے کہ یہ ملاقاتیں اچھی اور تعمیری رہیں.
مشترکہ کمیشن کے اجلاس ایسے وقت میں ہورہا ہے جب یورپ کو دیے جانے والے ایران کی جانب سے الٹی میٹم آئندہ دنوں تک ختم ہوجائے گا.
اسلامی جمہوریہ ایران نے گزشتہ 8 مئی کو یہ فیصلہ کیا تھا کہ جوہری معاہدے کے بعض احکامات پر عمل نہیں کرے گا اور معاہدے کے فریقین کو بھی 60 دن کا الٹی میٹم دیا تا کہ وہ تیل اور بینکاری شعبوں کے علاوہ دیگر امور سے متعلق اپنے وعدوں پر عمل کریں.
جوہری معاہدے سے امریکہ کی غیرقانونی علیحدگی سے ایک سال گزر گیا اور اسی دوران ایران نے صبر و تحمل کا مظاہرہ کرتے ہوئے دیگر فریقین کو اس نقصان کا ازالہ کرنے کا کافی وقت دیا.
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
3 + 12 =