علاقائی امن پاک ایران کی مشترکہ خواہش ہے: پاکستانی چیئرمین سینیٹ

اسلام آباد، 19 جون، ارنا - پاکستان کے چیئرمین سینیٹ نے کہا ہے کہ ایران اور پاکستان خطے میں امن چاہتے ہیں اور ہمیں امید ہے کہ مشترکہ مفادات کے حصول کے لئے سازگار ماحول فراہم ہوگا.

«صادق سنجرانی» نے بدھ کے روز ارنا نیوز کے نمائندے سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے اس امید کا اظہار کیا کہ موجودہ صورتحال آئندہ دنوں تک بحالی کی طرف جائے گی جو ایران اور پاکستان کے مفادات کے حصول کے لئے سازگار ثابت ہوگی.
انہوں نے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ دونوں ممالک مل کر مشکلات پر قابو پالیں گے اور ہم یہ بتانا چاہتے ہیں کہ ہمارے ایران کے ساتھ تعلقات کسی سے ڈھکے چھپے نہیں.
صادق سنجرانی نے ایران کے پارلیمانی وفد کے ساتھ گزشتہ روز ہونے والی اپنی ملاقات کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس نشست میں ایران مخالف امریکی پابندیوں اور جوہری معاہدے سے امریکی کی یکطرفہ علیحدگی پر بات چیت ہوئی.
انہوں نے پاک ایران سرحدی صورتحال سے متعلق کہا کہ ہم سرحدوں پر باہمی تجارت کو قانونی شکل دینا چاہتے ہیں اور اس مقصد کے لئے وزیراعظم پاکستان کی ہدایات پر ایک خصوصی کمیٹی تشکیل دی گئی ہے.
سنجرانی نے مزید کہا کہ ایران اور پاکستان نے یہ اتفاق کیا ہے کہ سرحدوں میں قیام امن و سلامتی کے لئے حکومتی اور پارلمانی سطح پر رابطوں میں اضافہ کیا جائے گا.
انہوں نے کہا کہ پاکستان کی جانب سے ایرانی سرحد پر فنسنگ کا عمل جاری رہے جا کا مقصد سرحدی علاقوں میں غیرقانونی سرگرمیوں کی روک تھام ہے.
پاکستان کے چیئرمین سینیٹ نے حالیہ علاقائی کشیدگی سے متعلق کہا کہ خطے میں کشیدگی کسی کے فائدے میں نہیں ہے اور نہ ہی اس سے امریکہ کو کچھ حاصل ہوگا.
انہوں ںے اس بات پر زور دیا کہ پاکستان چاہتا ہے کہ ایران اور امریکہ بات چیت کے ذریعے آپس کے مسائل کا حل نکالیں.
274**9393*
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
5 + 13 =