شنزو ابے کا دورہ ایران، دوستی مزید مضبوط ہوگی: جاپانی ٹی وی

بیجنگ، 13 جون، ارنا - جاپان کے سرکاری ٹیلی ویژن نے وزیراعظم شنزو ابے کے ایران کے سرکاری دورے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس دورے سے ایران اور جاپان کی دوستی میں اضافہ ہوگا.

این ایچ کے ٹی وی نے اپنی اس رپورٹ میں مزید کہا ہے کہ رواں سال ایران اور جاپان کے تعلقات کے آغاز کی 90ویں سالگرہ ہے اور جاپانی وزیراعظم نے اسی سلسلے میں ایران کا ایک اہم دورہ کیا.
رپورٹ کے مطابق، شنزو ابے ایران کے ساتھ تعلقات کو مزید بڑھانے کے خواہاں ہیں.
جاپانی ٹی وی نے مزید کہا کہ وزیراعظم شنزو ابے نے ایسے وقت میں ایران کا دورہ کیا جب خطے میں کشیدگی میں اضافہ ہوا ہے، جاپان نے ایران سے درخواست کی ہے وہ اب بھی جوہری معاہدے پر قائم رہے جبکہ ایرانی صدر حسن روحانی نے امریکہ کی یکطرفہ پابندیوں کے فوری خاتمے کا مطالبہ کیا ہے.
رپورٹ میں ایران اور جاپانی رہنماوں کے درمیان تہران میں ہونے والی وفود کی سطح پر ملاقات کا حوالہ دیتے ہوئے مزید کہا گیا ہے کہ صد روحانی نے جوہری معاہدے کی حمایت کرنے پر جاپان کا شکریہ ادا کیا ہے.
این ایچ کے نے ایران جاپان تعلقات کی تاریخ کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ جاپان نے 1929 میں تہران میں اپنا سفارتخانہ قائم کردیا، دوسری عالمی جنگ کی وجہ سے کچھ عرصے تک دونوں ملکوں کے درمیان تعلقات منقطع رہے جبکہ اس کے بعد پھر سے تعلقات بحال ہوئے.
جاپانی ٹی وی نے کہا کہ امریکہ نے اس دورے کا خیرمقدم کرتے ہوئے خطے میں کشیدگی کو ختم کرانے کے لئے جاپانی وزیراعظم کی کوششوں کی حمایت کا اعلان کیا ہے.
9410٭274٭٭
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@
 

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 2 =