ایران جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کا اجلاس رواں ماہ میں منعقد ہوگا: روس

ماسکو، 11 جون ، ارنا- روس کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ ایران جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کا اجلاس رواں مہینے میں منعقد ہوگا۔

"سرگئی لاوروف" نے منگل کے روز ایک پریس کانفرنس کے دوران مزید کہا کہ ایران جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کا آئندہ اجلاس، رکن ممالک کے سیاسی ڈائریکٹروں کی سطح پر منعقد ہوگا۔

 واضح رہے کہ روسی عہدیداروں نے حالیہ ہفتوں میں ایران جوہری معاہدے کی تازہ ترین صورتحال کا جائزہ لینے کے حوالے سے اس بین الاقوامی معاہدے کے مشترکہ کمیشن کے اجلاس کے انعقاد پر زور دیا تھا۔

 اس کے علاوہ روسی محکمہ خارجہ نے ایک بیان میں کہا تھا کہ ایران جوہری معاہدے کے مشترکہ کمیشن کے انعقاد کی ضرورت، واضح ہے۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ ایران جوہری معاہدے کی صورتحال کو بڑی سنجیدگی سے تعاقب کریں گے اور ذرائع ابلاغ کے مطابق ایران نے یورنیوم افزودگی کی مقدار کو چارگنا بڑھادیا ہے۔

روسی وزیر خارجہ نے ایران کیلئے یورپ کے مخصوص مالیاتی نظام انسٹکیس کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ یہ مالیاتی نظام، جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کی بدولت، ایران کیلئے موجودہ مسائل کو حل کرنے میں مددگار ثابت نہیں ہوگا۔

 انہوں نے مزید کہا کہ جوہری معاہدے کے اصولوں کے برعکس وہ ممالک جو ایران کیساتھ تجارتی لین دین کر رہے ہیں وہ اس مالیاتی نظام کے فریم ورک کے اندر ایران سے اپنے تجارتی تعلقات کو جاری نہیں کر سکتے ہیں اور یہ میکنزم صرف یورپی ممالک کیلئے قابل استعمال ہے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
7 + 4 =