وزیراعظم جاپان، امریکہ کیجانب سے ایران کیلئے کوئی پیغام نہیں لائیں گے

تہران، 11 جون، ارنا- جاپانی حکومت کے ایک عہدیدار نے کہا کہ وزیر اعظم جاپان نے اپنی حکمت عملی کی بنا پر ایران کے دورہ کا فیصلہ کیا ہے اور وہ اس دورے کے موقع پر امریکی حکام کیجانب سے ایران کیلئے کوئی پیغام نہیں لائیں گے۔

 انہوں نے مزید کہا کہ "شنزو ابے" کے آئندہ دورہ ایران کا مقصد تہران اور واشنگٹن کے درمیان حالیہ کشیدگی کو کم کرنا ہے۔

 ان خیالات کا اظہار جاپان کے ایک عہدیدار نے اسلامی جمہوریہ ایران میں قائم جاپانی سفارتخانے میں منعقدہ ایک اجلاس میں ارنا نمائندے کے سوال کے جواب میں کیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ جاپان کے وزیراعظم، اپنے ذاتی فیصلے کی بنا پر اور موجودہ نازک صوتحال میں تہران اور واشنگٹن کے درمیان حالیہ کشیدگی کو کم کرنے کیلئے اسلامی جمہوریہ ایران کا دورہ کریں گے۔

انہوں نے شنزو ابے کے آئنده دورہ ایران کے شیڈول کے حوالے سے کہا کہ وزیر اعظم جاپان، وزیر خارجہ " تاراکونو"  سمیت اعلی جاپانی وفد کی قیادت میں بدھ کے روز، دارالحکومت تہران کی مہر آباد ائیر پورٹ پر پہنچیں گے۔

جاپان کے اس عہدیدار کے مطابق، شنزو ابے، بدھ کے روز سعد آباد محل میں ایرانی صدر مملکت ڈاکٹر "حسن روحانی" کیساتھ ملاقات کریں گے اور اس ملاقات کے بعد دونوں ملکوں کے سربراہ، صحافیوں کیساتھ پریس کانفریس کریں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ وزیر اعظم جاپان، جمعرات کے روز قائد اسلامی انقلاب حضرت آیت اللہ "سید علی خامنہ ای" کیساتھ ملاقات کرنے کے بعد، جاپان روانہ ہوں گے۔

**9467

ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
2 + 1 =