ایران نے دوسرے ملکوں میں مداخلت پر مبنی سعودی دعوے کو مسترد کردیا

تہران، 30 مئی، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران نے بعض ممالک کے اندرونی معاملات میں مداخلت کرنے سے متعلق سعودی وزیرخارجہ کے حالیہ دعوے کو سختی سے مسترد کردیا ہے.

سعودی وزیر خارجہ ابراہیم العساف نے یہ دعویٰ کیا تھا کہ ایران بعض ممالک میں مداخلت کررہا ہے جسے ایرانی دفترخارجہ کے ڈائریکٹر جنرل برائے بین الاقوامی امن و سلامتی نے مسترد کردیا.
انہوں نے اس امید کا بھی اظہار کیا ہے کہ اسلامی سربراہوں کے حالیہ اجلاس عالم اسلام کے ترجیحی مسائل بالخصوص فلسطین پر توجہ مرکوز کی جائے گی.
«رضا نجفی» جو او آئی سی اجلاس میں ایرانی وفد کی قیادت کررہے ہیں، نے افتتاحی نشست کے دوران سعودی وزیر خارجہ کے ایران مخالف دعووں کی تردید کرتے ہوئے مزید کہا کہ ایران اسلامی تعاون تنظیم کے بانی ملک کی حیثیت سے یقین رکھتا ہے کہ ماہ رمضان المبارک میں ہونے والا یہ اجلاس امت مسلمہ کے درمیان اتحاد کو تقویت دے گا.
ایرانی وفد نے او آئی سی وزرائے خارجہ کونسل کے اجلاس کی قرارداد کی حمایت کی جس کا ایک اہم نکتہ فلسطینی عوام سے یکجہتی کا اظہار کیا ہے.
ایرانی وفد نے اس قرارداد کے بعض حصوں پر اپنے تحفظات کا اظہار کیا ہے جن میں ناجائز صہیونی ریاست کو تسلیم کرنے کے اشارے ملتے ہیں، اور وفد نے خط کے ذریعے تنظیم کے سیکریٹریٹ کو بھی آگاہ کردیا ہے.
274**9393*
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
8 + 3 =