ایران بھر میں تیسری لیلۃ القدر عقیدت و احترام کے ساتھ منائی گئی

تہران، 29 مئی، ارنا – اسلامی جمہوریہ ایران کے تمام چھوٹے اور بڑے شہروں میں عبادت گزاروں نے رمضان المبارک کی 23ویں رات لیلۃ القدر کو تہجد اور رب العزت سے راز و نیاز کے ساتھ گزارا.

رمضان المبارک کے آخری عشرہ کی طاق راتیں یعنی 19، 21، 23 لیالی قدر ہیں اور بعض روایات میں ہے کہ اس رات جبرائیلؑ اور فرشتے عابدین و ذاکرین پر صلوةٰ و سلام بھیجتے ہیں۔ یعنی ان کے حق میں رحمت اور سلامتی کی دعا کرتے ہیں.



اسلامی جمہوریہ ایران کے مختلف شہروں میں گزشتہ رات مساجد میں عبادات کا خصوصی انتظام کیا گیا ہے ، شہریوں نے اس رات میں اللہ کے حضور اپنے گناہوں کی معافی اور مغفرت کی رو رو کرکے  دعائیں کی.



تیسری شب قدر کی مناسبت سے ایران کے مقدس شہر مشہد، قم، شیراز کے شاہ چراغ ، بجنورد، سمنان سمیت مختلف شہروں میں آل محمد (ص) کے پیروکار سراسر غم اور عزاداریوں میں شریک ہوئے.

گزشتہ رات مشہد میں واقع امام رضا علیہ السلام کے مطہر روضے، قم میں واقع حضرت فاطمہ معصومہ (س) کی بارگاہ، شیراز میں شاہ چراغ کے روضے اور تہران میں واقع حضرت عبدالعظیم (س) کے روضے پر عزاداری کے محفل میں حکومتی اور مذہبی شخصیات سمیت مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد نے شرکت کی.

اس روح پرور محفل میں مولائے متقیان امام علی ابن ابی طالب (ع) کی عظمت اور اھلبیت علیھم السلام کی قربانیوں کی یاد میں مرثیہ اور نوحہ خوانی کی گئی.

ایرانی شہریوں نے مختلف شہروں میں ماہ مبارک رمضان کی 23ویں رات لیلۃ القدر کے مخصوص اعمال انجام دئے اور اہلبیت علیھم السلام کو اپنی مغفرت کا وسیلہ قرار دیا.

ماہ رمضان کی انیسویں، اکیسویں اور تیئسویں رات کو شب قدر کے طور پر منایا جاتا ہے جس کے خاص اعمال ہیں۔

شب قدر میں پوری رات دعا و مناجات میں بسر کی جاتی ہے- شب قدر پورے سال کی سب سے عظیم اور با فضیلت شب ہے اور اس رات کا عمل ہزار مہینوں کے عمل سے بہتر ہے اور شب قدر میں ہی اللہ تعالی انسانوں کی تقدیر رقم کرتا ہے۔

274*9393**



ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@


آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
4 + 10 =