ایران جوہری معاہدہ، یورپ کی سلامتی پر اثر پڑے گا: جرمن وزیر خارجہ

تہران،20 مئی، ارنا- جرمنی کے وزیرخارجہ نے ایران جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کے باوجود اس بین الاقوامی معاہدے کی اہمیت پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ جوہری معاہدے کا اختتام، یورپ کی سلامتی پر منفی اثرات مرتب کرے گا۔

یہ بات "ہایکو ماس" نے جرمن ٹی وی کے پروگرام Tagesschau کیساتھ انٹرویو دیتے ہوئے کہی۔
انہوں نے مزید کہا کہ ایران جوہری معاہدے کے حوالے سے امریکہ کیساتھ مذاکرات کا سلسلہ جاری رہے گا اور اس سلسلے میں امریکی وزیر خارجہ "مائیک پمیو" رواں مہینے کے آخری دونوں میں برلن کا دورہ کریں گے۔
واضح رہے کہ امریکی وزیر خارجہ نے مئی مہینے کے ابتدائی دونوں میں اپنے دورہ جرمنی کو "بین الاقوامی سلامتی کے مسائل" کی وجہ سے منسوخ کردیا۔
یہ بات قابل ذکر ہے کہ جرمن وزیر خارجہ نے اپنے روسی ہم منصب "سرگئی لاوروف" کیساتھ حالیہ ملاقات میں ایران جوہری معاہدے کے تحفظ کیلئے ایرانی حکام کیساتھ مذاکرات پر زور دیا تھا۔
انہوں نے مزید کہا کہ ایران کو جوہری معاہدے سے علیحدگی کی اجازت نہیں ہے کیونکہ اگر وہ اس معاہدے سے دستبرار ہوجائےتو وہ افزودہ یورونیم کی پیداواری کا از سر نو آغار کرے گا۔
جرمن خارجہ کا اس طرح کے دعوی اس وقت سامنے آیا ہے جب بین الاقوامی ایٹمی ایجنسی نے اپنی 14 مسلسل رپورٹوں میں جوہری معاہدے سے متعلق اسلامی جمہوریہ ایران کی پاسداری کی تصدیق کی ہے۔
9467**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@