یورپ، ایران مخالف امریکی پابندیوں سے متاثر ہے: آسٹرین صدر

تہران، 16 مئی، ارنا - آسٹریا کے صدر نے کہا ہے کہ ایران مخالف امریکی پابندیاں نہ صرف اشتعال انگیزی ہے بلکہ اس سے یورپی ممالک بھی متاثر ہوئے ہیں.

یہ بات صدر "الیگزینڈر وان ڈیر بیلین" نے دورہ روس کے موقع پر صدر "ولادیمیر پیوٹن" کے ہمراہ مشترکہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی.
آسٹرین صدر نے ایران جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے مزید کہا کہ یورپ ابھی تک ایران سے تجارت کے لئے کوئی قابل عمل نظام قائم نہیں کرسکا.
انہوں نے کہا کہ یورپ بشمول آسٹریا اور ہماری کمپنیاں بھی ایران مخالف امریکی پابندیوں کی زد میں آئے ہیں جسے ہم اشتعال انگیزی سمجھتے ہیں.
الیگزینڈر وان ڈیر بیلین کا کہنا تھا کہ عالمی جوہری ادارے نے 13 مرتبہ جوہری معاہدے سے متعلق ایران کی کارکردگی کی تصدیق کی تاہم اس کے باوجود ایران پر پھر سے پابندیاں عائد ہوئیں.
انہوں نے بغیر کسی قابل قبول ثبوت کے جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی پر تنقید کرتے ہوئے خبردار کیا کہ ایسے اقدامات سے عالمی معاہدوں پر بھروسہ اٹھ جائے گا.
صدر الیگزینڈر وان نے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ آسٹریا اور یورپی یونین ایران جوہری معاہدے کو بچانے کے حق میں ہیں.
9467*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@