امریکہ نے ایرانی چابہار بندرگاہ کو پابندیوں سے استثنیٰ دے دیا

کابل، 14 مئی، ارنا – امریکہ کی نائب وزیرخارجہ جنہوں نے حالیہ دنوں میں کابل کا دورہ کیا ہے، کہا ہے کہ چابہار بندرگاہ کو ایران کے خلاف نئی اقتصادی پابندیوں سے استثنی حاصل ہوئی ہے.

یہ بات 'ایلس ویلز' نے افغان حکام کے ساتھ ملاقات کے دوران گفتگو کرتے ہوئے کہی.
افغانستان میں امریکہ کو بہت زیادہ مفادات ہیں اور افغانستان پر امریکہ کے فوجی حملے سے 18 سالوں گزرنے کے باوجود ابھی بھی امریکی فورسز کی ایک بڑی تعداد اس ملک میں ہیں اور بظاہر ایسا محسوس ہوتا ہے کہ ایرانی چابہار بندرگاہ کو امریکی پابندیوں کی فہرست سے ہٹانے کا مقصد افغانستان میں امریکی مفادات کی فراہمی میں مدد کرنا ہے.
افغانستان، ایک ایسا ملک ہے جس کے اردگرد خشکی ہے تو آزاد پانیوں کی تک رسائی کیلئے افغانستان کے نزدیکترین راستے پاکستان اور ایران ہیں.
افغانستان اور پاکستان کے درمیان موجودہ کشیدگی اور تناؤ کے باوجود چابہار بندرگاہ، افغانستان کو آزاد پانیوں سے منسلک کرنے کیلئے سب سے پر امن راستہ ہے اور واشنگٹن اس معاملے سے اچھی طرح واقف ہے.
9410٭274٭٭
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@