مشہور پاکستانی ڈائریکٹر کا ایران سے مل کر مشترکہ فلم بنانے کا اعلان

اسلام آباد، 13 مئی، ارنا - مشہور پاکستانی فلم ساز «سید نور » جنہوں نے عالمی فجر میلے میں شرکت کے لئے حال ہی میں ایران کا دورہ کیا تھا، کا کہنا ہے کہ میں نے ایرانی عوام کے دلوں میں پاکستانیوں کے لئے بڑی محبت پائی اور میں چاہتا ہوں ایک مشترکہ فلم بناؤں جس میں دنیا کے لئے اس محبت کو اجاگر کروں.

سید نور جن کا پورا نام 'سید غلام محی الدین نور' ہے، 1951 کو پاکستانی شہر «لاہور» میں پیدا ہوئے. سید نور پاکستانی سنیما اور ٹیلی ویژن کی جانی پہچانی شخصیت ہیں.
انہوں نے فلمسازی کے علاوہ سنیما انڈسٹری میں پروڈیوسر، مصنف اور اداکار کے طور پر بھی نمایاں خدمات سرانجام دی ہیں.
حکومت پاکستان نے 2013 میں انھیں اعلی کارکردگی دیکھانے پر ستارہ امتیاز سے نوازا تھا.
سید نور نے حال ہی میں تیسری مرتبہ ایران کا دورہ کیا جس کا مقصد 37ویں عالمی فجر فلم میلے میں شرکت کرنا تھا. وہ اپنی اہلیہ صائمہ نور جو خود ایک مشہور اداکارہ ہیں، کو بھی ساتھ لے گئے تھے.
ارنا نیوز کے نمائندے سے گفتگو کرتے ہوئے سید نور کا کہنا تھا کہ ایران کی تہذیب و ثقافت کو بہتر انداز میں جاننے کے لئے فجر میلہ ایک سنہری موقع تھا.
انہوں نے اس عزم کا اعادہ کیا کہ ایران سے مل کر ایک مشترکہ فلم بنائی جائے جس کا مقصد دونوں ملکوں کی دوستی اور محبت کو اجاگر کرنا ہے.
سید نور نے مزید بتایا کہ اس فلم کے لئے ایران اور پاکستان کی صلاحیتوں کو استفادہ کیا جائے گا، یہ فلم خاندانی امور پر بنائی جائے گی، جس کی شوٹنگ دونوں ملکوں میں ہوگی.
پاکستانی فلمساز نے اس موقع پر لاہور میں ایرانی قونصلٹ اور خانہ فرہنگ کے سربراہوں سے شکریہ ادا کیا جنہوں نے اس منصوبے کے لئے ان سے تعاون کا اعلان کیا.
انہوں نے مزید کہا کہ اس فلم کا مقصد ایران اور پاکستان کے عوام کے درمیان باہمی رابطے کو مزید مضبوط کرنا ہے.
274**9393*
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@