ایران، جوہری ہتھیاروں کے پیچھے نہیں جس سے ٹرمپ لاعلم ہے

نیو یارک، 10 مئی، ارنا - اقوام متحدہ میں تعینات اسلامی جمہوریہ ایران کے مستقل مندوب نے کہا ہے کہ ہم ہرگز جوہری ہتھیاروں کے پیچھے نہیں تاہم لگتا ہے ڈونلڈ ٹرمپ اس حقیقت سے لاعلم ہیں.

«مجید تخت روانچی» نے امریکی نیوز چینل ایم ایس این بی سی کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ امریکی صدر کا یہ کہنا ہے کہ ایران کے پاس جوہری ہتھیار نہیں ہونے چاہئیں، جبکہ انہوں نے عالمی جوہری ادارے کی 14 رپورٹس نہیں دیکھی ہوں گی جن میں بار بار اس بات کی تصدیق کی گئی ہے کہ ایران، جوہری معاہدے پر قائم ہے.
انہوں نے کہا کہ جوہری ہتھیار ہمارے مفادات کے خلاف ہیں، ہمارے سپریم لیڈر کے فتوے کے مطابق جوہری ہتھیار پر اسلام میں پابندی ہے لہذا ہمارا ایسا کوئی مقصد نہیں کہ جوہری ہتھیار بنائیں.
ایرانی مندوب نے بتایا کہ جہاں تک ایران سے بات چیت کرنے کی صدر ٹرمپ کی تجویز ہے تو سب سے پہلے انہیں یہ بتایا ہوگا کہ وہ پہلے خود کیوں مذاکرات کی میز چھوڑ کر گئے؟ ایران تو جوہری معاہدے کے تمام فریقین بشمول امریکہ کے ساتھ مشترکہ کمیشن میں مذاکرات کررہا تھا.
انہوں نے مزید کہا کہ ٹرمپ اچانک اور یکطرفہ طور پر جوہری معاہدے سے نکل گئے، انہوں ںے کیوں اس حوالے سے ابھی تک کوئی جواب نہیں دیا؟ امریکی صدر نے اس جوہری معاہدے کو ختم کردیا جو نہ صرف دونوں ممالک کے درمیان طے ہوا بلکہ دنیا کے دیگر طاقتور ملکوں نے اس پر دستخط کئے تھے.
9410٭274٭٭
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@