برطانوی نائب وزیر خارجہ کا دورہ ایران، جوہری معاہدے پر تبادلہ خیال

تہران، 10 مئی، ارنا - برطانیہ کے نائب وزیر خارجہ'ریچڑد مور' نے ایران جوہرے معاہدے کی تازہ ترین صورتحال کا جائزہ لینے کیلیے ایران کا دورہ کیا۔

برطانوی نائب وزیر خارجہ کا دورہ ایران، جوہری معاہدے پر تبادلہ خیال
تہران، 10 مئی، ارنا - برطانیہ کے نائب وزیر خارجہ'ریچڑد مور' نے کہا ہے کہ وہ ایران جوہرے معاہدے کی تازہ ترین صورتحال کا جائزہ لینے کیلیے ایران کا دورہ کیا۔
یہ ایک روزہ دورہ ایسے وقت میں سامنے آرہا ہے کہ ایرانی صدر نے 8مئی کو امریکہ کی جوہری معاہدے سے غیرقانونی علیحدگی کے جواب میں ہیوی واٹر اور افزودہ یورونیم کی فروخت کو 60 دن کے لئے روکنے کا باضابطہ اعلان کردیا ہے.اور یہ فیصلہ کیا ہے کہ ایران 8 مئی سے جوہری معاہدے کے بعض احکامات پر عمل نہیں کرے گا اور اس معاہدے کے فریقین کو بھی 60 دن کا الٹی میٹم دیا ہے تا کہ وہ تیل اور بینکاری شعبوں کے علاوہ دیگر امور سے متعلق اپنے وعدوں پر عمل کریں.
برطانیہ میں تعینات ایرانی سفیر 'حمید بعیدی نژاد' نے بھی اپنے ذاتی ٹوئٹر اکاونٹ پر لکھا ہے کہ ریچڑد مور ایک اعلی سیاسی وفد کی قیادت میں علاقائی، بین الاقوامی،باہمی تعلقات اور جوہری معاہدےکی حالیہ صورتحال پر بات چیت کیلئے ایران کا دورہ کیا ہے
ایران میں تعینات برطانوی سفیر' راب مکر' نے بھی کہا ہے کہ برطانیہ جوہری معاہدے کے مکمل نفاذ کی حمایت کرے گا۔
یاد رہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل نے بدھ کے روز اپنے ایک تفصیلی بیان میں کہا ہے کہ آج بروز 8 مئی 2019 سے ایران، جوہری معاہدے کے تحت جو اقدامات کرنے کا پابند تھا ان میں سے بعض پر عملدرآمد کو روکے گا.
9410*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@