ترکی، چین اور بھارت، ایرانی تیل کی خریداری کا سلسلہ جاری رکھیں گے: امریکی تجزیہ کار

تہران، 7مئی، ارنا – واشنگٹن کے ریسرچ سنٹر کے ایک توانائی تجزیہ کار 'فرانک وراسترو' نے کہا ہے کہ ترکی، چین اور بھارت، ایران سے تیل کی خریداری کا سلسلہ جاری رکھیں گے.

رائٹرز نیوز ایجنسی کے مطابق، 'فرانک وراسترو' نے کہا کہ امریکی حکومت نے ایران سے متعلق تیل پابندیوں پر استنثی ملنے کی مہلت کے اختتام کے باوجود اب تک ان تین ممالک( ترکی ،چین اور بھارت) کی تیل درآمدات کے لیے کوئی روشن اور واضح موقف نہیں اپنایا ہے.
وراسترو نے کہا کہ ہرچند چین ایران سے تیل کی درآمدات کو کم کر رہا ہے لیکن اس کا مطلب یہ نہیں ہے کہ چینی حکام ایرانی خام تیل کو چھوڑ دیں گے، بلکہ چین قریب مستقبل میں ایرانی تیل کی خریداری کے لیے امریکی مالیاتی نظام اور ایران مخالف امریکی تیل پابندیوں کو بائی پاس کرنا چاہتا ہے.
اس سلسلے میں ایک بھارتی تجریہ کار نے کہا کہ امریکہ کی جانب سے ایرانی خام تیل پر پابندی لگانا، نہ صرف بھارت کو ایک معاشی چیلنچ میں داخل کرے گا بلکہ وہ بھارت کی مرکزی حکومت کیلئے ایک سیاسی چیلنج بھی ہوگا.
9410**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@