ایران پابندیوں کی زد میں آنے والی ادویات خود تیار کرے گا

کرج، 7 مئی، ارنا - نائب ایرانی صدر برائے امور سائنس اور ٹیکنالوجی نے اس عزم کا اعادہ کیا ہے کہ ایران، پابندیوں کی زد میں آنے والی ادویات کو اب خود تیار کرے گا.

یہ بات "سورنا ستاری" نے منگل کے روز ایرانی صوبے البرز میں سائنسدانوں کی تیار کردہ کینسر اور ذیابیطس کی چار نئی ادویات کی رونمائی تقریب میں خطاب کرتے ہوئے کہی۔
ستاری نے مزید کہا کہ باہر سے منگوائی جانے والی ادویات کی اب ملکی سطح پر تیاری صحت پروگرام کی سرفہرست میں ہوگی.اس موقع پر انہوں نے کہا کہ ابھی صورتحال میں امریکی پابندیاں ادویات کی درآمدات پر اثر پڑتی ہے مگر ہم ادویات کی پیداواری میں خود کفیل ہوچکے ہیں اور اس راستے کو جاری رکھیں گے۔
عالمی جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی اور ایران مخالف بینکاری پابندیوں کے بعد اسلامی جمہوریہ ایران میں ادویات کی درآمدات بینکاری پابندیوں سے متاثر ہوتی ہے کیونکہ پیسے کی ادائیگی کے لئے تمام بینکاری چینلز بند کئے گئے ہیں۔
ٹرمپ کی حکومت دعوی کرتی ہے کہ ایران مخالف پابندیوں کا مقصد اس ملک کے عوام پر دباؤ ڈالنا نہیں مگر ادویات کی درآمدات کی رکاوٹوں نے ثابت کردیا کہ امریکی پابندیاں انسانی حقوق کی کھلی خلاف ورزی کی علامت ہے۔
274٭9393٭٭
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@