ایران، آرمینیا سے تعاون بڑھانے کا خواہاں ہے: صدر روحانی

تہران، 27 فروری، ارنا- ایرانی صدر نے اسلامی جمہوریہ ایران اور آرمینیا کے درمیان دوستانہ اور تاریخی تعلقات کا حوالہ دیتے ہوئے باہمی تعلقات کی مزید توسیع اور مضبوطی کیلئے دونوں ممالک کی صلاحیتوں سے فائدہ اٹھانے کی ضرورت پر زور دیا-

یہ بات ڈاکٹر "حسن روحانی" نے ایران اور آرمینیا کے اعلی سطحی وفود کے درمیان مشترکہ اجلاس میں کہی۔
انہوں نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران، ہمسایہ ممالک بالخصوص آرمینیا کیساتھ تعلقات کے فروغ کا خواہاں ہے اور اس حوالے سے ضروری اقدامات اٹھانے کیلئے سنجیدہ ہے۔
صدر روحانی نے آرمینیا میں ہونے والی تبدیلیوں کو اس ملک میں جمہوریت کے قیام کے حوالے سے مثبت قدم قرار دیتے ہوئے کہا کہ وزیر اعظم آرمینیا کا دورہ ایران، دونوں ممالک کے درمیان، سیاسی اقتصادی اور ثقافتی تعلقات میں مزید مضبوطی کا باعث ہوگا۔
انہوں نے باہمی تعلقات کے فروغ کی راہ میں دونوں ممالک کے مضبوط سیاسی عزم و ارادے پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ہیمں باہمی تجارتی اور اقتصادی تعلقات کی سطح کو مناسب سطح تک پہنچنے کے لئے مشترکہ کوششوں کو جاری رکھنے کی ضرورت ہے۔
صدر روحانی نے کہا کہ ایران اور یوریشین اقتصادی یونین کے درمیان طے پانے والے ترجیحی تجارتی معاہدے نے ایران اور آرمینیا کے تعلقات کی توسیع کے حوالے سے مناسب مواقع فراہم کیا ہے۔
انہوں نے کہا کہ ایران اور آرمینیا، باہمی تعلقات کو توانائی کے میدان میں بشمول گیس اور بجلی کے شعبوں میں فروغ دے سکتے ہیں اور اس حوالے سے ایران، آرمینیا میں آئل ریفائری کے قیام کیلئے سرمایہ کاری کر سکتا ہے۔
*9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@