ایران کیلئے  یورپی مالیاتی نظام، دو طرفہ تجارتی تعلقات کے فروغ کا باعث ہوگا: فن لینڈ

تہران، 16 فروری، ارنا – اسلامی جمہوریہ ایران میں تعینات فن لینڈ کے سفیر نے کہا ہے کہ ایران کے لئے یورپی مالیاتی نظام، انسٹیکس ایرانی اور یورپی کمپنیوں کے درمیان تجارتی تعلقات کی سہولتوں کا باعث ہوگا.

یہ بات "کی جو نوروانتو" نے ہفتہ کے روز ارنا نیوز ایجنسی کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں نے جوہری ہتھیاروں کے عدم پھیلاؤ میں جوہری معاہدے کی اہمیت کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ یہ عالمی معاہدہ علاقائی سیکورٹی کو فروغ میں اہم کردار ادا کر رہا ہے.
نوروانتو نے ایران جوہری معاہدے سے امریکہ کی یک طرفہ علیحدگی پر اپنے افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ فن لینڈ اور دوسرے یورپی فریقین اس معاہدے پر قائم ہیں اور اس پر عملدرآمد کو جاری رکھیں گے.
انہوں نے یورپ کے مالیاتی میکنزم کو یورپی یونین کی دیانتداری کی علامت قرار دیتے ہوئے کہا کہ مخصوص مالیاتی نظام انسٹیکس مستقبل میں یورپی اور ایرانی کمپنیوں کے درمیان تجارتی تعلقات کو فروغ دینے کا باعث ہوگا.
یہ بات قابل ذکر ہے کہ یورپ کے مخصوص مالیاتی نظام کا مقصد جسے انسٹیکس میکنزم کا نام دیا گیا ہے، ایران مخالف امریکی پابندیوں کو بائی پاس کرنا ہے، اس کا اہم کام ایران کے ساتھ تجارتی لین دین کی حمایت کرنا ہے.
گزشتہ ہفتے رومانیہ میں یورپی یونین کے وزارتی اجلاس کے بعد جرمنی، برطانیہ اور فرانس کے وزرائے خارجہ نے ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں ایران کے لئے مخصوص مالیاتی نظام کے اجرا کا باضابطہ طور پر اعلان کردیا تھا.
رپورٹ کے مطابق، یورپ کے مخصوص مالیاتی چینل کا مرکزی دفتر پیرس میں ہوگا جسے INSTEX کا نام دیا گیا ہے اور یہ تجارتی تبادلے کے سازوسامان کا مخفف ہے.
تینوں یورپی ممالک انسٹیکس میکنزم کے حصہ دار ہوں گے اور نامور جرمن بینکر اس کی قیادت کریں گے.
274*9393**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@