دہشتگرد، دنیا کے کسی کونے کو اپنے لئے محفوظ نہ سمجھیں: ایرانی صدر

تہران، 15 فروری، ارنا - ایرانی صدر نے کہا ہے کہ دہشتگرد نہ صرف شام میں بلکہ دنیا کے کسی کونے کو اپنے لئے محفوظ ٹھیکانہ نہ سمجھیں.

یہ بات ڈاکٹر ''حسن روحانی'' نے روسی حکومت کی میزبانی میں شام سے متعلق 'سوچی' منعقدہ ایران، روس اور ترکی کے سربراہی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہی.
اس موقع پر انہوں ںے عالمی برادری سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ شام کے خلاف صہیونی جارحیت اور دراندازی کا نوٹس لے.
انہوں نے مزید کہا کہ شام پر صہیونی جارحیت سے عالمی امن و سلامتی کو خطرات کا سامنا ہیں لہذا بین الاقوامی برادری کو چاہئے کہ اس صورتحال کو قابل میں لائے
ڈاکٹر روحانی نے 5 ایجنڈے کا ذکر کیا جس میں شامی گروہوں کے درمیان غیرملکی مداخلت کے بغیر قومی مذاکرات کا آغاز جس کا مقصد ملک میں امن کا قیام ہے.
انہوں نے مزید کہا کہ بین الاقوامی برادری کو شامی پناہ گزینوں کی ملک واپسی اور شام کی تعمیر نو میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینا ہوگا.
ایرانی صدر نے کہا کہ شام میں آخری دہشتگرد کے خاتمے تک اس کے خلاف جنگ کو جاری رکھنا ہوگا اور اس کے علاوہ شامی حکومت کے بغیر ملک میں موجود غیرملکی فورسز بشمول امریکی فوج کو فوری طور پر وہاں سے نکلنا ہوگا.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@