سلامتی کونسل کی ایران میں دہشتگردی کی مذمت

نیو یارک، 15 فروری، ارنا - اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے ایرانی صوبے سیستان و بلوچستان میں حالیہ دہشتگردی کے واقعے کی شدید مذمت کی ہے.

سلامتی کونسل نے گزشتہ روز اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ تمام ممالک اس دہشتگردی کے واقعے میں ملوث عناصر کا پیچھا کرنے کے لئے ایران کے ساتھ تعاون کریں.
اراکین سلامتی کونسل نے 13 فروری کو سیستان و بلوچستان صوبہ میں رونما ہونے والے واقعے کو مکروہ اور بزدلانہ کاروائی قرار دیتے ہوئے اس کی پرزور الفاظ میں مذمت کی ہے.
انہوں نے اس واقعے کے متاثرین اور حکومت ایران کے ساتھ ہمدری کا اظہار کرتے ہوئے زخمیوں کی جلد صحبت یابی کی تمنا کی.
بیان کے مطابق، اراکین سلامتی کونسل ایک بار پھر دہشتگردی کی تمام شکل و شمائل کی مذمت کرتے ہوئے اسے عالمی امن و سلامتی کے لئے بڑا خطرہ سمجھتے ہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ ایسے اقدامات کے حامی اور اس میں ملوث عناصر کی مالی پشت پناہی کرنے والوں کو جوابدہ ہونا ہوگا.
یاد رہے کہ ایران کے جنوب مشرقی صوبے میں زاہدان،خاش روڈ پر پاسداران انقلاب کی اہلکاروں کی بس پر سفاکانہ خودکش حملے کے بعد دنیا کے مختلف ممالک نے اس واقع کی شدید مذمت کی ہے.
تہران میں مختلف ممالک کے سفارتی مشنز بشمول فرانس، لیبیا، ترکی اور سوئس سفارتخانوں نے اپنے بیان میں اس حملے کی مذمت کرتے ہوئے ایرانی قوم، حکومت اور متاثرین کے ساتھ ہمدری کا اظیار کیا.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@