فورسز کی بس پر حملے میں شہید ہونے والوں کے خون کا بدلہ لیں گے: ایرانی ترجمان

تہران، 13 فروری، ارنا- ایرانی محمکہ خارجہ کے ترجمان نے ملک کے جنوبی شہر زاہدان کے قریب حالیہ دہشتگردانہ حملے پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ شہید ہونے والوں کے خون کا حساب لیا جائے گا۔

ترجمان "بہرام قاسمی" نے پاسداران انقلاب فورس کی بس پر دہشت گرد تنظیم "جیش العدل" کے غیر انسانی حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے حملے میں شہید اور زخمی ہونے والوں کے لواحقین کے ساتھ تعزیت اور ہمدردی کا اظہار کردیا۔
انہوں نے مزید کہا کہ یہ دہشتگرد تنظیم خطے کے بعض ممالک کی مالی، سیاسی اور عسکری حمایت یافتہ ہے-
قاسمی نے کہا کہ اس طرح کے غیر انسانی جرائم اور بزدلانہ حملوں سے دہشتگردی کے خلاف جنگ میں ہمارا عزم متزلزل نہیں ہوجاتا ہے بلکہ ہم خطے میں انسداد دہشتگردی کے حوالے سے ماضی سے زیادہ پرعزم ہوجائیں گے۔
تفصیلات کے مطابق، بدھ کے روز ایک خودکش بمبار نے ایران کے جنوب مشرقی صوبے سیستان و بلوچستان میں زاہدان شہر سے خاش جانے والی پاسداران اسلامی انقلاب کے اہلکاروں کی بس کو نشانہ بنایا۔
ایرانی پاسداران انقلاب فورس کے قدس ہیڈ کوارٹر کے شعبہ تعلقات عامہ کے بیان کے مطابق، ہونے والے کار بم دھماکے میں متعدد سرحدی اہلکار شہید اور زخمی ہوگئے ہیں۔
غیر مصدقہ اطلاعات کے مطابق اس حملے میں شہید ہونے والوں کی تعداد اب تک 41 ہوگئی ہیں۔
"جیش العدل" دہشتگرد تنظیم نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کرلی ہے۔
*9467
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@