عراق، ہمسایوں پر دراندازی کیلئے امریکی اڈہ نہیں بنے گا: عمار حکیم

بغداد، 4 فروری، ارنا - عراق کے نامور سیاسی رہنما نے خبردار کیا ہے کہ عراق کو ہرگز ہمسایہ ممالک پر نظر رکھنے یا دراندازی کے لئے بطور امریکی اڈہ استعمال کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی.

یہ بات ''سید عمار حکیم'' جو عراق کی سیاسی جماعت حکمت تحریک کے سربراہ بھی ہیں، نے امریکی صدر کے حالیہ بیان پر اپنے ردعمل میں کہی.
انہوں نے مزید کہا کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی خواہش ہے کہ وہ عراق کے ذریعے ہمسایہ ممالک پر نظر رکھیں، مگر عراق ایسا نہیں ہونے دے گا اور نہ ہی ہم عراق کو اس مقصد کے لئے استعمال کرنے کی اجازت دیں گے.
اعلی عراقی سیاستدان نے کہا کہ عراق دوسروں کی علاقائی اور بین الاقوامی پراکسی کا حصہ نہیں بنے گا اور نہ ہی دوسروں پر نظر رکھنے کا مرکز بنے گا.
انہوں نے اپنے ٹوئٹر پیغام میں مزید کہا کہ عراق کے آئین کے مطابق ہم علاقائی اور عالمی امن و استحکام کے مقابلے میں ہرگز خطرہ نہیں بن سکتے.
سید عمار حکیم نے کہا کہ عراق کو ہمسایہ ممالک پر نقصان پہنچانے کا ذریعہ بنانا ہمارے ملکی اور قومی مفادات کے منافی ہے لہذا ہم ایسا ہرگز نہیں ہونے دیں گے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@