ایران یورپ تجارتی راہ ہموارہ ہوگئی: چائنا ڈیلی

بیجنگ، 1 فروری، ارنا - چین کے مشہور انگریزی اخبار ''چائنا ڈیلی'' نے کہا ہے کہ یورپ کی جانب سے مخصوص مالیاتی نظام انسٹیکس کے نفاذ کے بعد اسلامی جمہوریہ ایران کی تجارت کے لئے راہ ہموارہ ہوگئی.

چائنا ڈیلی نے جمعہ کے روز اپنی ایک رپورٹ میں کہا کہ ایران انسٹیکس میکنزم کی مدد سے یورپی ممالک کے ساتھ اپنی تجارتی اور مالیاتی سرگرمیوں کا ازسرنو آغاز کرسکتا ہے.
رپورٹ کے مطابق، انسٹیکس میکنزم ایران کے یورپی یونین کے ساتھ معاشی تعلقات کی توسیع کا ایک اہم ذریعہ ہے جس کے پہلے مرحلے میں خوراک، ادویات، طبی آلات اور زرعی مصنوعات شامل ہیں.
چائنا ڈیلی نے کہا کہ ایران پر امریکی پابندیوں کے بعد واشنگٹن نے ایران سے تجارت کرنے پر یورپ کو انتباہ کیا مگر اس کے باوجود یورپ نے مخصوص مالیاتی نظام کا اعلان کرکے جوہری معاہدے سے اپنی حمایت کا وعدہ پورا کیا.
اخبار کے مطابق، انسٹیکس میکنزم ابھی آپریشنل نہیں ہوا تاہم تین یورپی ممالک جرمنی، فرانس اور برطانیہ نے یہ عہد کیا ہے کہ عالمی معیار کے مطابق اس نظام کو عملی جامہ پہنائیں گے.
یہ بات قابل ذکر ہے کہ رومانیہ میں یورپی یونین کے وزارتی اجلاس کے بعد جرمنی، برطانیہ اور فرانس کے وزرائے خارجہ نے ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں ایران کے لئے مخصوص مالیاتی نظام کے اجرا کا باضابطہ طور پر اعلان کردیا.
رپورٹ کے مطابق، یورپ کے مخصوص مالیاتی چینل کا مرکزی دفتر پیرس میں ہوگا جسے INSTEX کا نام دیا گیا ہے اور یہ ''تجارتی تبادلے کے سازوسامان'' کا مخفف ہے.
تینوں یورپی ممالک انسٹیکس میکنزم کے حصہ دار ہوں گے اور نامور جرمن بینکر اس کی قیادت کریں گے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@