انسٹیکس میکنزم: یورپ، امریکہ کے مقابلے میں کھڑا ہوگیا: ایرانی سفارتکار

تہران، 1 فروری، ارنا - ایرانی دفترخارجہ کے ایک سنیئر اہلکار نے کہا ہے کہ یورپ کی جانب سے ایران کے لئے مخصوص مالیاتی نظام INSTEX کا اعلان امریکی پالیسی کے مقابلے میں کھڑے ہونے کے مترادف ہے.

یہ بات دفترخارجہ کے ڈائریکٹر جنرل برائے بین الاقوامی امن و سلامتی ''رضا نجفی'' نے ارنا نیوز ایجنسی کو خصوصی انٹرویو دیتے ہوئے کہی.
انہوں نے مزید کہا کہ یورپی ممالک ایران کے لئے مالیاتی نظام نافذ کرکے امریکہ کی یکطرفہ پالیسیوں کے مقابلے میں کھڑے ہوگئے.
انہوں نے یورپ کے انسٹیکس میکنزم کو مثبت قرار دیتے ہوئے بتایا کہ یورپ کا مالیاتی نظام ایران جوہری معاہدے کی حمایت جاری رکھنے کا پہلا قدم ہے اور ہمیں امید ہے کہ یہ میکنزم جلد آپریشنل ہوگا.
سنیئر ایرانی سفارتکار کا کہنا تھا کہ ہمیں آپریشنل مرحلے میں یہ دیکھنا ہوگا کہ یہ میکنزم کہاں تک چل سکتا ہے اور کمپنیاں کس حد تک اس کے ساتھ کام کرسکتی ہیں.
انہوں نے مزید کہا کہ انسٹیکس سے متعلق ماہرین کی سطح پر اجلاس بلانا ہوگا تاہم امید کی جاتی ہے کہ یورپ کا میکنزم ایرانی توقعات پر پورا اترے گا.
یہ بات قابل ذکر ہے کہ رومانیہ میں یورپی یونین کے وزارتی اجلاس کے بعد جرمنی، برطانیہ اور فرانس کے وزرائے خارجہ نے ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں ایران کے لئے مخصوص مالیاتی نظام کے اجرا کا باضابطہ طور پر اعلان کردیا.
رپورٹ کے مطابق، یورپ کے مخصوص مالیاتی چینل کا مرکزی دفتر پیرس میں ہوگا جسے INSTEX کا نام دیا گیا ہے اور یہ ''تجارتی تبادلے کے سازوسامان'' کا مخفف ہے.
تینوں یورپی ممالک انسٹیکس میکنزم کے حصہ دار ہوں گے اور نامور جرمن بینکر اس کی قیادت کریں گے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@