امریکہ نے صرف ایران سے وعدہ خلافی نہیں کی: صدر روحانی

تہران، 30 جنوری، ارنا - صدر مملکت ایران نے کہا ہے کہ امریکہ نے صرف ہمارے ساتھ وعدہ خلافی نہیں بلکہ اس نے یورپ اور چین سے کئے گئے وعدوں کے علاوہ عالمی معاہدوں کو بھی پامالی کیا ہے.

یہ بات ڈاکٹر حسن روحانی نے آج بروز بدھ اسلامی انقلاب کی 40ویں سالگرہ کے موقع پر بانی انقلاب حضرت امام خمینی (رح) کے مزار پر حاضر ہوکر خطاب کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے کہا کہ امریکہ ایران جوہری معاہدے کے علاوہ نفاٹا اور ٹرانس پیسفک پارٹنرشپ اور پیرس کے معاہدوں کی خلاف ورزی کی ہے.
روحانی نے کہا کہ امریکہ مسلمانان اور فلسطینوں کے حقوق کو پامال کر کے شام، یمن، عراق اور افغانستان کے عوام پر ظلم کیا ہے.
ایرانی صدر نے بتایا کہ امریکہ کی غلطی ایک، دو یا تین نہیں ہے، اس ملک نے دو سال کے بعد ایران جوہرے معاہدے پر اپنے کئے گئے وعدوں کی مکمل خلاف ورزی کر کے اس معاہدے سے باہر نکلا.
روحانی نے جب تک ہم امام خمینی کے راستے پر گامزن ہیں اور آیت اللہ خامنہ ای کی پالیسیوں کا احترام کرتے ہیں تب تک کوئی طاقت، ہم پر نقصان نہیں پہنچ سکتی ہے.
انہوں نے ملک کے اندر اتحاد اور یکجہتی کے تحفظ کے لیے امام خمینی (رح) کے بیانات کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں سب کو دشمنوں کے سامنے اپنے اتحاد کا تحفظ کرنا ہو گا، ہم تمام مسائل پر قابو پا سکتے ہیں.
روحانی نے گزشتہ 40 سالوں میں اقتصادی سمیت تمام شعبوں میں ایران کے خلاف بھاری بیرونی دباؤ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ ہم یہاں ملکی مفادات کی حفاظت اور وطن عزیز کے دفاع کے لیے بانی انقلاب کے ساتھ تجدید عہد کریں گے.
انہوں نے ایرانی انقلاب کے 40 ویں سالگرہ کی آمد پر ایرانی عوام کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ آج ایرانی قوم خود، اپنے ملک کا نظام چلاتے ہیں.
9410*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@