عراقچی کی سربراہ عالمی جوہری ادارے سے ملاقات

تہران،28 جنوری، ارنا- سنیئر ایرانی سفارتکار اور نایب وزیر خارجہ "سید عباس عراقچی" نے ویانا میں عالمی جوہری ادارے کے سربراہ "یوکیا امانو" کیساتھ ملاقات کی۔

ہونے والی ملاقات میں دونوں فریقین نے ایران جوہری معاہدے کے فریم ورک کے اندر تعاون کی آخری صورتحال پر تبادلہ خیال کیا۔
یہ ملاقات ایسے وقت میں ہوئی جب عالمی جوہری ادارے نے اپنی تیرہویں رپورٹ میں اعلان کیا ہے کہ ایران، جوہری معاہدے سے متعلق اپنے کیے گئے وعدوں پر شفافیت کیساتھ عمل کیا ہے۔
اس کے علاوہ ایران جوہری معاہدے سے امریکی علیحدگی کے بعد، یورپی یونین نے ایران کے ساتھ تجارتی لین دین کا سلسلہ جاری رکھنے کیلئے ایک مخصوص مالیاتی نظام قائم کرنے کا بند و بست کررہا ہے۔
جرمنی کے وزیر خارجہ نے بھی کہا ہے کہ ایران کیلئے یورپی مالیاتی نظام کے نفاذ کے حوالے سے جرمن، فرانس،برطانیہ اور یورپی یونین کے درمیان مذاکرات کا سلسلہ جاری ہے اور ایس پی وی نظام جلد نافذ ہوگا۔
قابل ذکر ہے کہ عراقچی نے گزشتہ روز آسٹریا، سلوواکیا اور بلغاریہ کے حکام کے ساتھ مذاکرات کے لئے ان ملکوں کے دورے پر روانہ ہوگئے.
تفصیلات کے مطابق، اعلی ایرانی سفارتکار تین یورپی ملکوں کے حکام کے ساتھ سیاسی مشاورت کی نشستوں میں شریک ہوں گے.
سید عباس عراقچی میزبان ممالک کے وزرائے خارجہ اور دیگر حکام سے بھی دوطرفہ تعلقات، خطے کی تازہ ترین صورتحال اور مختلف عالمی امور پر بھی گفتگو کریں گے.
9467*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@