روس اور چین سے تعلقات ایران کی دفاعی حکمت عملی کا اہم جز ہیں: جنرل صفوی

تہران، 28 جنوری، ارنا - ایرانی سپریم لیڈر کے سنیئر مشیر اور پاسداران انقلاب فورس کے سابق کمانڈر نے کہا ہے کہ روس اور چین سے تعلقات ایران کی دفاعی حکمت عملی کا ایک اہم جز ہیں.

یہ بات میجر جنرل ''سید یحیی رحیم صفوی'' نے پیر کے روز اسلامی نظام میں دفاع اور سیکورٹی سے متعلق ایک قومی سمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے مزید کہا کہ دنیا میں امریکہ کے حریف بشمول چین اور روس کے ساتھ تعلقات کو بڑھانا ایران کی ترجیح ہے اور ہم اسے ملک کی دفاعی اور سلامتی حکمت عملی کا ایک اہم جز سمجھتے ہیں.
جنرل صفوی نے ایران کے خلاف امریکہ اور صہیونیوں کی نفسیاتی جنگ اور میڈیا میں پروپیگنڈے کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اسلامی انقلاب کے 40 سال گزرنے کے بعد بھی آج عالمی سامراج اور صہیونیوں نے امریکی قیادت میں ایران کے خلاف نئی مہم جوئی کا آغاز کردیا ہے.
انہوں نے مزید بتایا کہ امریکہ اور ناجائز صہیونی ریاست میڈیا میں منفی مہم اور نفسیاتی جنگ کے ذریعے خطے میں ایران کی پوزیشن اور ملک کی میزائل سرگرمیوں کے خلاف پیروپیگنڈے کررہے ہیں جس کا واحد مقصد عالمی رائے عامہ کو ایران کے خلاف کرنا ہے.
ایرانی سپریم لیڈر کے معاون خصوصی نے بتایا کہ ایران میں 2010 اور گزشتہ سال جنوری میں رونما ہونے والے واقعات امریکی اور صہیونیوں کی مداخلت اور ایران کے خلاف نفسیاتی جنگ کی واضح مثال تھی.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@