سپین میں ایران کی سیر و سیاحت پر خصوصی نشست کا انعقاد

میڈرڈ، 25 جنوری، ارنا - سپین میں 39ویں عالمی سیاحتی نمائش کے موقع پر اسلامی جمہوریہ ایران میں موجود سیاحتی مقامات اور ٹورازم صنعت کو متعارف کروانے کے حوالے سے خصوصی نشست کا انعقاد کیا گیا جس میں دونوں ممالک کے ٹور آپریٹرز کی بڑی تعداد نے شرکت کی.

تفصیلات کے مطابق، اس خصوصی نشست میں نائب ایرانی صدر اور ادارہ سیاحت اور قومی ورثہ کے سربراہ 'علی اصغر مونسان' اور سپین میں تعینات ایرانی سفیر 'حسن قشقاوی' بھی شریک تھے.
اس موقع پر ایران میں موجود تاریخی مقامات، سیاحتی مواقع اور ٹورازم صنعت کو متعارف کروایا گیا جبکہ مختلف سرکاری اور نجی کمپنیوں اور ٹور آپریٹرز کے عہدیداروں نے ٹورازم سرگرمیوں پر تقاریر کیں.
ایران کی فضائی سیر و سیاحت سروسز کمپنی کے سربراہ 'محمد علی اشرف وافقی' جو دیگر نجی کمپنیوں کی نمائندگی کررہے تھے، نے اس موقع پر کہا کہ اس نمائش میں ایرانی کمپنیوں کی شرکت کا اصل مقصد سیاحت اور سفری شعبوں میں ایران کی قابلیت کو اجاگر کرنا ہے.
انہوں نے بتایا کہ عالمی رپورٹس کے مطابق سیاحتی لحاظ سے ایران کا شمار دنیا میں سب سے کم ریسک والے ملکوں میں ہوتا ہے جہاں امن و سلامتی کی صورتحال اچھی اور اسے امریکہ، کینیڈا اور یورپی یونین کے ممالک کے برابر مانا جاتا ہے.
اس موقع پر ہسپانوی ٹور آپریٹرز کے بعض فعال کارکنوں نے بھی خطاب کیا جس میں انہوں نے ایران میں عوام کی مہمان نوازی اور ان کی محبت کو سراہا.
انہوں نے مزید کہا کہ ایران میں سیاحت کے بڑے مواقع ہیں جبکہ مغربی میڈیا منفی عزائم کے تحت ایران کے خلاف نفسیاتی فضا ایجاد کرتے ہیں جس کا مقصد ایرانی کی صلاحیتوں کو متاثر کرنا ہے.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@