مغوی ایرانی اہلکار مکمل صحت و سلامتی میں ہیں: ایرانی کمانڈر

بوشہر، 24 جنوری، ارنا - اسلامی جمہوریہ ایران کی سرحدی پولیس فورس کے کمانڈر نے کہا ہے کہ دہشتگردوں کے ہاتھوں یرغمال باقی کے سرحدی اہلکار مکمل صحت و سلامتی میں ہیں.

بریگیڈیئر جنرل ''قاسم رضایی'' نے بوشہر صوبے میں سرحدی کمانڈروں کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ پاک ایران سرحد پر اغوا ہونے والے ایرانی سرحدی محافظ کی صورتحال خطرے سے باہر ہے اور انھیں بازیاب کرانے کی کوششیں بھی جاری ہیں.
انہوں نے مزید بتایا کہ اہلکاروں کی رہائی ہماری اصل ترجیح ہے تاہم دہشتگردوں کی جانب سے اب تک کوئی جواب نہیں ملا.
بریگیڈیئر جنرل رضایی نے کہا کہ یہ واقعہ پاکستانی سرحد پر پیش آیا تھا اور ہمسایہ ملک اس کوشش میں ہے کہ باقی کے مغوی اہلکاروں کی آزادی کو یقینی بنائے.
انہوں نے ایران اور پاکستان کے درمیان تقرببا ہزار کلومیٹر زمینی سرحد کا حوالہ دیتے ہوئے مزید کہا کہ پاکستان کے ساتھ ہر سطح پر اچھا تعاون قائم ہے تاہم پاکستانی حکومت کی بلوچستان کے بعض علاقوں پر نگرانی کمزور ہے.
بریگیڈیئر جنرل قاسم رضایی نے بتایا کہ پاکستانی حکومت اپنے دور درواز سرحدی علاقوں پر گرفت رکھنے کے لئے پُرعزم ہے. مشترکہ سرحدوں پر دہشتگرد کاروائیاں دونوں ممالک کی اقوام اور حکومتوں کے لئے ناپسندیدہ ہیں.
یاد رہے کہ گزشتہ سال دہشتگرد عناصر نے پاک ایران سرحدی علاقے میرجاوہ میں 12 ایرانی محافظوں کو اغوا کیا جبکہ گزشتہ سال نومبر میں دہشتگردوں نے 12 میں سے 5 اہلکاروں کو رہا کردیا.
274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@