ایران کیساتھ مستقل مالیاتی چینل بنانا چاہتے ہیں: سوئس سفیر

تہران، 23 جنوری، ارنا – ایران میں متعین سوئٹزرلینڈ کے سفیر نے کہا ہے کہ ان کا ملک ایران کیساتھ مالیاتی لین دین سے متعلق مستقل نظام بنانے کا خواہاں ہے.

یہ بات 'مارکوس لائیٹنر' نے گزشتہ روز سنیئر ایرانی رکن پارلیمنٹ اور او آئی سی پارلیمانی یونین کی ایگزیکٹو کمیٹی کے چیئرمین 'کاظم جلالی' کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہی.
انہوں نے مزید بتایا کہ سوئٹزرلینڈ یورپی یونین کا ایک رکن نہیں ہے تاہم ایران کے ساتھ تجارت کے لئے یورپ کے مخصوص مالیاتی میکنزم (SPV)کو سنجیدگی سے تعاقب کر رہا ہے.
انہوں نے کہا کہ سوئس نے پابندیوں کے دوران ایران کے ساتھ اچھی طرح اپنے مالیاتی تعلقات کو برقرار رکھا ہے.
سوئس کے سفیر نے بتایا کہ ہم اس بات پر یقین ہیں کہ ایران جوہری معاہدہ ایک عالمی سمجھوتہ ہے جس پر تمام فریقین کوعمل درآمد کرنا ہوگا.
'مارکوس لائیٹنر' نے دونوں ممالک کے درمیان باہمی اعتماد پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ہم ایران کے ساتھ زرعی اور علمی جیسے نئے شعبوں میں تعلقات کے فروغ کے خواہاں ہیں.
اس موقع میں ایرانی عہدیدار کاظم جلالی نے ایران اور سوئس سمیت یورپ کے درمیان باہمی تعلقات بڑھانے کےلیے موجودہ مواقع کا ذکر کرتے ہوئے باہمی تعلقات کےمزید فروغ کی ضرورت پر زوردیا.
9410*274**
ہمیں اس ٹوئٹر لینک پر فالو کیجئے. IrnaUrdu@